‏15 سالہ ترک لڑکی جو پانچ غیر ملکی زبانیں بولتی ہے

0 552

استنبول کی ایک 15 سالہ لڑکی نے پانچ غیر ملکی زبانیں سیکھ لی ہیں، انگریزی، فرانسیسی، اطالوی، عربی اور ہسپانوی۔

اجلال داغ چی استنبول کے کرتال اناطولین امام-خطیب ہائی اسکول میں 10ویں جماعت کی طالبہ ہیں۔ انہوں نے بغیر کسی لینگویج کورس یا خصوصی تعلیم کے یہ پانچ زبانیں سیکھی ہیں۔ وہ اب جرمن اور روسی زبان سیکھ رہی ہیں۔

اجلال زبانیں سیکھنے کی کوشش کرنے والے طلبہ کی یوٹیوب وڈیوز کے ذریعے مدد کرتی ہیں۔ وہ مختلف زبان سیکھنے کے طریقے سکھا رہی ہیں اور سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر لائیو براڈکاسٹس میں حصہ لے رہی ہیں۔ اپنی نئی وڈیو میں اجلال نے بتایا ہے کہ انہوں نے ایک مہینے میں کس طرح ہسپانوی زبان سیکھی۔

انادولو ایجنسی سے بات کرتے ہوئے اجلال نے بتایا کہ انہیں بچپن ہی سے زبانیں سیکھنے کا شوق تھا۔ "پرائمری اسکول میں میں نے انگریزی سیکھنا شروع کی، پھر سیکنڈری میں عربی۔ ان زبانوں کے ساتھ ساتھ میں نے 11 سال کی عمر میں خود سے فرانسیسی سیکھنے کا آغاز کیا۔ حال ہی میں جنوری میں میں نے اطالوی سیکھنا شروع کی اور مئی میں ہسپانوی۔ ہسپانوی سیکھنا کچھ آسان تھا کیونکہ یہ مجھے آنے والی دوسری زبانوں سے ملتی جلتی ہے۔ کیونکہ مجھے فرانسیسی اور اطالوی آتی تھی اس لیے میں نے ہسپانوی ایک مہینے میں سیکھ لی۔” ان کا کہنا ہے کہ انگریزی سیکھنے میں سب سے آسان زبان تھی۔

اجلال کا کہنا ہے کہ زبانوں کی کوئی خاص تعداد سیکھنے کا ہدف تو نہیں ہے لیکن وہ سیکھی گئی زبانوں کو اپنی روزمرہ زندگی میں آزادانہ طور پر استعمال کرنا ضرور چاہتی ہیں۔ "زیادہ تر لوگوں کو یقین نہیں آتا کہ کوئی اپنے بل بوتے پر بھی زبان سیکھ سکتا ہے، بغیر کسی کورس یا استاد کی رہنمائی کی۔ تو جب مجھے یہ اندازہ ہوا کہ بغیر کسی سپورٹ کو کوئی زبان سیکھی جا سکتی ہے تو میں نے اس حوالے سے یوٹیوب پر رہنمائی دینا بھی شروع کر دی۔”

تبصرے
Loading...