اسرائیلی فوجیوں کے حملے میں انادولو ایجنسی کے صحافی ہدف کا نشانہ بن گئے

0 807

اسرائیلی فوجیوں نے جمعے کو غزہ کی پٹی میں پرامن ریلیوں کو کور کرنے والے انادولو ایجنسی کے فوٹو جرنلسٹ کو زخمی کردیا۔

علی جاداللہ، جنہیں پیشانی پر ربڑ کی گولی لگی، کو ایک مقامی ہسپتال لے جایا گیا۔

اس سے قبل جاد اللہ 25 مئی 2018ء کو مشرقی غزہ میں ایک مظاہرے کو کور کرتے ہوئے سینے پر آنسو گیس کا شیل لگنے سے بھی زخمی ہوئے تھے۔ وہ 22 مارچ 2019ء کو ہونے والے مظاہروں میں بھی زخمی ہوئے تھے۔

گزشتہ سال مارچ سے غزہ میں شروع ہونے والی ریلیوں میں بفر زون کے قریب تعینات اسرائیلی فوجیوں کے ہاتھوں تقریباً 270 افراد شہید ہو چکے ہیں اور ہزاروں زخمی ہوئے۔

یہ مظاہرے غزہ کا 12 سال طویل اسرائیلی محاصرہ ختم کرنے کا مطالبہ کر رہے ہیں، جس نے اس ساحلی پٹی کی معیشت تباہ کر کے رکھ دی ہے اور اس کے 20 لاکھ باسیوں کو بنیادی سہولیات تک سے محروم کردیا ہے۔

تبصرے
Loading...