آٹوموٹِو مارکیٹ کی کارکردگی نے 10 لاکھ کاروں کی سالانہ فروخت پر واپسی کا اشارہ دے دیا

0 298

گاڑیوں کے فروخت کے بہترین سالوں جیسی ماہانہ کارکردگی ظاہر کرکے آٹوموٹو مارکیٹ نے اشارہ دے دیا ہے کہ وہ ایک مرتبہ پھر دس لاکھ یونٹوں کیس پر پہنچ رہے ہیں۔

مسافر کار اور لائٹ کمرشل گاڑیوں کی فروخت میں تقریباً دو گنی ہوگئی، جو آٹوموٹو ڈسٹری بیوٹرز ایسوسی ایشن (ODD) کے ڈیٹا کے مطابق سال بہ سال میں 89.5 فیصد بڑھی ہے۔پچھلے مہینے تقریباً 47,122 گاڑیاں فروخت ہوئی تھیں جبکہ فروری 2019ء میں یہ تعداد 24,875 تھی۔

اس عرصے میں مسافر کاروں کی فروخت تقریباً 37,727 رہی جبکہ 9,400 لائٹ کمرشل گاڑیاں بھی اس مہینےمیں فروخت ہوئی، جو پچھلے سال کے اسی مہینے کے مقابلے میں 65.7 فیصد زیادہ تعداد ہے، جو سال کے آغاز پر فروخت میں اضافے کے رحجان کی طرف اشارہ کر رہی ہے۔

پچھلے مہینے کے اعداد و شمار 2015ء اور 2016ء میں فروری کے مہینوں کی سطح پر پہنچ گئے ہیں کہ جن میں سالانہ دس لاکھ کے قریب یونٹس فروخت ہوئے تھے۔

ترک شہریوں نے فروری 2015ء میں 55,331 گاڑیاں خریدیں کہ جن میں 40,817 مسافر اور 14,514 لائٹ کمرشل گاڑیاں شامل ہیں۔ اُس سال میں گاڑیوں کی کل فروخت 9,68,017 تک گئی۔ فروری 2015ء اور 2020ء میں فرق 8,209 یونٹس کا ہے یعنی 17.42 فیصد کی کمی۔ اسی طرح فروری 2016ء میں 40,588 مسافر کاریں اور 12,237 لائٹ کمرشل گاڑیاں فروخت ہوئیں جبکہ اُس سال کا اختتام 9,83,720 یونٹس کی فروخت کے ساتھ ہوا۔ اس سال کے فروری کو گزشتہ مہینے سے ملائیں تو فرق 5,703 یونٹس کا بنتا ہے۔

ترکی کی آٹوموٹو انڈسٹری کو 2018ء کی دوسری ششماہی میں کرنسی کی شرحِ تبادلہ میں آنے والی بڑی کمی بیشی کی وجہ سے کئی مسائل کا سامنا کرنا پڑا کہ جس کے بعد قرضوں پر شرحِ سود بھی بڑھی اور نتیجتاً مقامی مارکیٹ میں گاڑیوں کی طلب میں تیزی سے کمی آئی۔ پچھلا سال تو بہت ہی مایوس کن رہا کہ جس میں مسافر کاروں اور لائٹ کمرشل گاڑیوں کی فروخت میں سالانہ 22.8 فیصد کمی آئی۔ ٹیکس پر چھوٹ، رعایت اور سستے قرضہ جات کی مہم نے کچھ آسانیاں پیدا کیں۔

رواں سال کے ابتدائی دو مہینوں یعنی جنوری اور فروری کو دیکھیں تو مسافر کاروں اور لائٹ کمرشل گاڑیوں کی فروخت میں مجموعی طور پر 89.6 فیصد کا اضافہ دیکھنے کو ملتا ہے یہ تعداد 2018ء کے انہی دو مہینوں میں محض 39,248 تھی۔

تبصرے
Loading...