ترکی-ایران سرحد پر قدرتی گیس کی پائپ لائن میں دھماکا

0 121

ایران سے ترکی کو قدرتی گیس فراہم کرنے والی پائپ لائن میں ایک پراسرار دھماکے کے بعد آگ لگ گئی ہے۔

مقامی حکام نے بتایا ہے کہ دھماکا مشرقی صوبہ آغری میں گوربولاک سرحدی گزرگاہ کے قریب پائپ لائن کے ایک حصے میں ہوا۔ اس سے پائپ لائن میں آگ لگ گئی۔ گیس کی سپلائی کاٹ دی گئی ہے اور فائر بریگیڈ کا عملہ آگ بجھانے میں مصروف ہو گیا۔

سکیورٹی اداروں نے معاملے کی تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے۔

ایران کی قومی گیس کمپنی کے ڈائریکٹر مہدی جمشیدی کے مطابق دھماکے کے بعد ایران کی گیس برآمدات عارضی طور پر معطل ہو گئی ہیں۔

ایران کے سرکاری ٹیلی وژن نے اسے ایک "دہشت گرد” حملہ قرار دیا ہے۔ پائپ لائن تقریباً 10 ارب مکعب میٹر گیس سالانہ لے جاتی ہے، جو ماضی میں علاقے میں سرگرم PKK عناصر کے حملوں کی زد میں رہ چکی ہے۔

تبصرے
Loading...