Browsing Category

مضامین

ایک مضبوط ترکی، ایک مضبوط خِطہ

جب سلطنتِ عثمانیہ ترقیاتی لحاظ سے مغربی ریاستوں سے پیچھے رہ گئی تو سلطنت کی اشرافیہ نے زوال کے اسباب کی تحقیقات کیں تاکہ حکومت کی اصلاح کے لیے ضروری اقدامات اٹھائے جا سکیں۔ لیکن یورپ صنعتی انقلاب اور دنیا بھر میں نو آبادیاتی نظام کی بدولت…

‘ترک بمقابلہ کُرد’ کی بحث اور چند حقائق

آپریشن چشمہ بہار کے آغاز سے جن بحثوں سے جنم لیا ہے ان میں سب سے زیادہ سفید جھوٹ یہ ہے کہ یہ ترکوں اور کُردوں کے مابین جنگ ہے۔ یہ بات یا تو لاعلمی کی بنیاد پر کی جاتی ہے یا غلط اطلاعات پھیلانے کی جان بوجھ کر کی گئی کوشش ہوتی ہے۔ ترکی…

ترکی کے سول ملٹری تعلقات کا نیا ماڈل

اسلامی دنیا میں ترکی، پاکستان اور مصر کو سول ملٹری تعلقات میں سنجیدہ بحران کا سامنا رہا ہے جس کی وجہ سے سیاسی عدم استحکام سے اِن ممالک کی معاشی اور سماجی ترقی پر بہت بُرے اثرات مرتب ہوتے چلے آئے ہیں۔ ترکی بہرحال ان مسائل سے آگے نکل چکا ہے۔…

صدر ایردوان کی ریٹائرمنٹ، وقت ابھی نہیں آیا

صدر رجب طیب ایردوان نے گزشتہ بدھ کو انقرہ میں ترکی کے 30 شہروں کے میئرز کی میزبانی کی۔ کابینہ کے وزراء اور صدارتی کونسل برائے لوکل گورنمنٹ پالیسی کے اراکین کے ساتھ مل کر انہوں نے تجاویز بھی سنیں اور اہم اہداف کے حصول کے لیے اپنی ٹیم کو…

انقرہ اور استنبول میں شکست کے بعد آق پارٹی کا تجدیدی منصوبہ اگلے ہفتے شروع ہو گا

ترکی کی حکمران جماعت آق پارٹی کی گذشتہ بلدیاتی انتخابات میں انقرہ اور استنبول سے شکست کے بعد 2023ء کے انتخابات کے لیے تجدیدی منصوبہ لانچ کرنے کا اعلان کیا گیا ہے۔ یہ تجدیدی منصوبہ اگلے ہفتے سے شروع کیا جائے گا۔ اس سے قبل آق پارٹی مختلف…

قطر میں نئے فوجی اڈے کا افتتاح رواں سال ہوگا

"تمہارے پیچھے سمندر ہے اور سامنے دشمن۔ واپس جانے کا اب کوئی راستہ نہیں۔" 711ء میں اپنے فوجیوں کے دل سے دشمن کا خوف نکالنے کے لیے طارق ابنِ زیاد نے اپنی کشتیاں جلا دی تھیں اور یہ تاریخی کلمات ادا کیے تھے۔ آج قطر کے دارالحکومت دوحہ میں انہی…

عالمی سیاست میں طاقت کا نیا توازن اور ترکی کا کردار

سرد جنگ کے خاتمے کے بعد بظاہر ایک یَک قطبی عالمی نظام اُبھرا۔ امریکا نے دنیا کے تنہا قائد اور واحد تھانیدار کا عالمی کردار حاصل کیا اور اس کا نام نہاد 'نیو ورلڈ آرڈر' ان غیر منصفانہ اور غیر قانونی واقعات کے ساتھ تکمیل کو پہنچا کہ جو سرد جنگ…

مسئلہ کشمیر: عمران خان بھی لیڈر بن سکتے ہیں – انصار عباسی

بھارت کشمیر کو ہڑپ کر گیا۔ اگرچہ میرا ایمان ہے کہ بھارت کو یہ کارروائی بہت مہنگی پڑے گی اور آزادیٔ کشمیر کی جدوجہد میں مزید تیزی آئے گی لیکن گلہ یہ ہے ہم کیا کر رہے ہیں۔ ٹرمپ نے کشمیر پر ثالثی کی بات کی تو ایسا لگا جیسے ہم نے دنیا فتح کر…

کیا مسئلہ کشمیر سے پاکستان باہر ہو چکا ہے؟

مقبوضہ کشمیر کے حوالے سے بھارتی راجیہ سبھا نے جو بل منظور کیا ہے اس نے نہ صرف مسئلہ کشمیر پر بھارت کا حتمی فیصلہ سنایا ہے بلکہ بھارت کے ساتھ اس کے مکمل تعلق بھی تشکیل دے دیا ہے۔ اس بل کے بعد مقبوضہ کشمیر کو عملی طور پر دو حصوں میں تقسیم کر…

‏15 جولائی کی مزاحمت بحیثیت ایک جمہوری سبق اور مغرب کا زوال

‏15 جولائی بغاوت کو تین سال ہوگئے ہیں۔ خدا اس ملک اور دیگر ممالک کی بھی ایسی ناقابلِ برداشت غداریوں سے حفاظت کرے۔ تصور کیجیے آپ ریٹائر ہوکر سکون کی زندگی گزارنے کے لیے گھر پر بیٹھے ہیں اور اچانک ترک پرچم بردار ایف-16 طیارے ہمارے دارالحکومت…