صدر ایردوان دورۂ کویت کے بعد قطر پہنچ گئے

0 206

صدر رجب طیب ایردوان کویت کے بعد خلیجی ریاست قطر پہنچ گئے ہیں۔ دوحہ آمد پر وزیر دفاع خالد بن محمد العطیہ اور ترکی کے سفیر برائے قطر محمد مصطفیٰ گوکسو کی زیرِ قیادت وفود نے ان کا استقبال کیا۔

صدرایردوان اپنے دورے میں امیرِ قطر شیخ تمیم بن حماد الثانی سے ملاقات کریں گے۔

دونوں سربراہان دو طرفہ تعاون کو بڑھانے کے مواقع کے ساتھ ساتھ علاقائی و بین الاقوامی معاملات پر تبادلہ خیال بھی کریں گے۔

اس دورے پر صدر کے ہمراہ اعلیٰ سطحی وفود بھی موجود ہے جن میں وزیر خزانہ و مالیات بیرات البیراک، وزیر قومی دفاع خلوصی آقار، وزیر نوجوانان و کھیل محمد قصاب اوغلو، قومی انٹیلی جنس ادارے (MIT) کے سربراہ خاقان فدان، کمیونی کیشنز ڈائریکٹر فخر الدین آلتن اور صدارتی ترجمان ابراہیم قالن شامل ہیں۔

اس سے پہلے کویت آمد پر امیرِ کویت شیخ نواف الاحمد الجابر الصباح اور ترکی کی سفیر برائے کویت عائشہ ہلال نے صدر ایردوان کا استقبال کیا۔

صدر ایردوان نے امیرِ کویت سے اپنے پیش رو شیخ صباح الاحمد الجابر الصباح کے انتقال پر تعزیت کی کہ جن کا حال ہی میں 91 برس کی عمر میں انتقال ہوا ہے۔ ملاقات میں دو طرفہ امور اور علاقائی مسائل پر بھی گفتگو کی گئی۔

وزیر خارجہ مولود چاؤش اوغلو نے پچھلے ہفتے امیرِ کویت کے انتقال پر تعزیت کے لیے یہاں کا دورہ کیا تھا۔

ترکی اور 1961ء میں آزادی حاصل کرنے والے کویت نے 2014ء میں سفارتی تعلقات کے قیام کے 50 سال مکمل ہونے کا جشن منایا تھا۔ ترکی اور کویت یکساں ثقافتی و تاریخی تناظر میں کثیر الجہتی تعلقات رکھتے ہیں۔

ترکی کے کویت کے تعلقات نے حالیہ کچھ سالوں میں اعلیٰ سطحی دوروں اور متعدد معاہدوں کی وجہ سے تیزی آئی ہے۔ 2017ء میں دونوں ملکوں کے مابین پانچ سرکاری دورے ہوئے، جبکہ 2018ء میں مرحوم امیر الصباح نے استانبول میں ہونے القدس پر ہونے والے اسلامی کانفرنس تنظیم کے غیر معمولی اجلاس میں شرکت کی۔ اسی سال کویت کی قومی اسمبلی کے اسپیکر مرزوق علی الغانم نے صدر رجب طیب ایردوان کی تقریب حلف برداری اور انطالیہ میں ہونے والے یوریشین ممالک کی پارلیمنٹس کے اسپیکرز کے تیسرے اجلاس میں شرکت کے لیے ترکی کا دورہ کیا۔

دونوں ملکوں کا دو طرفہ تجارت کا حجم 2018ء کے اختتام تک 678 ملین ڈالرز تھا۔ اس وقت 300سے زیادہ کویتی ادارے ترکی میں کام کر رہے ہیں اور ان کمپنیوں کی سرمایہ کاری کا کل حجم 1.7 ارب ڈالرز ہے۔ ترکی میں کویت کی سرمایہ کاری کے شعبے مالیات، تعمیرات، تجارت و صنعت ہیں۔ دوسری جانب کویت میں حال ہی میں ترک اداروں کے حاصل کردہ ٹینڈرز کی مالیت 6.5 سے 7 ارب ڈالرز ہے۔

تبصرے
Loading...