ترک صدر کی عفرین آپریشن کے شہید کی نماز جنازہ میں شرکت

0 970

ترک صدر رجب طیب ایردوان نے ایزیورم سے تعلق رکھنے والے انفنٹری لیفٹیننٹ محمد کیر کی نماز جنازہ میں شرکت کی جو شام کے علاقے آفرین میں جاری آپریشن شاخ زیتون میں دہشتگردوں کا مقابلہ کرتے ہوئے شہید ہو گئے تھے۔

اس موقع پر ترک صدر نے کہا، "ہم دہشتگردوں کے خلاف اپنی جدوجہد میں فتح کے قریب ہیں خصوصا آفرین آپریشن میں۔ میں دل سے شہداء کے وارثین نے اظہار تعزیت کرتا ہوں”۔

آپریشن شاخِ زیتون ترکی کی طرف سے شامی صوبہ عفرین میں پی کے کے/پی وائے ڈی/وائے پی جی/کے سی کے اور داعش کے دہشتگردوں کے خلاف 20 جنوری کو شروع کیا گیا تھا۔
ترک جنرل اسٹاف کے مطابق آپریشن کا مقصد ترک سرحدوں کے ساتھ خطے میں سیکورٹی اور استحکام قائم کرنا ہے اور اس کے ساتھ ساتھ دہشتگردوں کے ظلم اور بربریت سے شامی عوام کو تحفظ فراہم کرنا ہے۔
رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ یہ آپریشن بین الاقوامی قانون اور یو این سیکورٹی کونسل کے قراردادوں کے فریم ورک کے اندر رہتے ہوئے ترکی کے حقوق کے تحت ہو رہا ہے۔ اقوام متحدہ کے چارٹر کے مطابق کسی بھی ملک کو اپنے دفاع کے لیے قدم اٹھانے کا حق ہے تاہم اس سلسلے میں شام کی سالمیت کا احترام کیا جائے گا۔
ملٹری نے کہا ہے کہ یہ بات "انتہائی اہمیت” رکھتی ہے کہ اس آپریشن میں کسی سویلین کو نقصان نہ پہنچے۔
تبصرے
Loading...