ترک اسٹریم پروجیکٹ کو بوسنیا تک پہنچانے کے لیے بھرپور مدد فراہم کریں گے، طیب ایردوان

0 531

صدر رجب طیب ایردوان نے بوسنیا و ہرزیگووینا کی صدارتی کونسل کے چیئرمین میلوراد دودِک اور رکن شفیق ظفرووِچ سے ملاقات کے بعد اُن کے ہمراہ ایوانِ صدر میں ایک مشترکہ پریس کانفرنس کی۔

بوسنیا و ہرزیگووینا صدارتی کونسل کے اراکین کی انقرہ میں میزبانی پر مسرت کا اظہار کرتے ہوئے صدر ایردوان نے بلقان کے لیے بوسنیا و ہرزیگووینا کی اہمیت کی طرف توجہ دلائی اور کہا کہ بوسنیا و ہرزیگووینا کا امن اور استحکام نہ صرف بلقان بلکہ پورے یورپ کے امن، استحکام اور تحفظ کے لیے ضروری ہے۔

مذاکرات کے دوران دونوں ممالک کے درمیان تجارتی و اقتصادی سرگرمیوں میں اضافے کے لیے مواقع پر گفتگو کی گئی جس پر صدر ایردوان نے ترکی اور بوسنیا و ہرزیگووینا کے درمیان آج آزاد تجارت کے نظرثانی شدہ معاہدے کا حوالہ دیا اور کہا کہ معاہدہ دونوں ملکوں کو تجارتی حجم کو 1 ارب ڈالرز تک پہنچنے میں مدد دے گا۔ صدر ایردوان نے کہا کہ "توانائی، دفاعی صنعت، سیاحت، زراعت اور کاشت کاری ہمارے ایجنڈے پر سب سے اوپر ہیں۔ ہم خاص طور پر ترک اسٹریم پروجیکٹ کو بوسنیا و ہرزیگووینا تک لے جانے کے لیے تمام قسم کی مدد فراہم کر یں گے۔”

علاقائی و بین الاقوامی مسائل پر گفتگو کے بارے میں بات کرتے ہوئے صدر ایردوان نے کہا کہ انہوں نے بلقان میں علاقائی تعاون کو بڑھانے پر زور دیا اور یہ بھی کہ ترکی- بوسنیا و ہرزیگووینا -سربیا اور ترکی بوسنیا و ہرزیگووینا -کروشیا سہ فریقی میکانزم کے لیے ملاقاتوں کا ہدف طے کیا۔ انہوں نے بوسنیا و ہرزیگووینا کے ہر مسئلے کو اپنا مسئلہ سمجھتے ہوئے حل کرنے کی کوشش کا عزم بھی ظاہر کیا۔ صدر ایردوان نے مزید کہا کہ "دو طرفہ اور کثیر طرفہ پلیٹ فارمز دونوں پر ہم بوسنیا و ہرزیگووینا کو اپنے تمام اداروں اور تنظیموں کے ذریعے ہر قسم کی مدد فراہم کریں گے۔”

بوسنیا و ہرزیگووینا صدارتی کونسل کے چیئرمین دودِک نے کہا کہ انہوں نے ترکی اور بوسنیا و ہرزیگووینا کے درمیان تعلقات پر جامع گفتگو کی اور بوسنیا و ہرزیگووینا کو مدد فراہم کرنے پر صدر ایردوان کا شکریہ ادا کیا۔ اس امر پر زور دیتے ہوئے کہ نیٹو رکنیت بوسنیا و ہرزیگووینا کے لیے اہم ہے، کونسل چیئرمین دودِک نے کہا کہ انہیں اس معاملے پر بھی ترکی کی مدد کی ضرورت ہے۔

مشترکہ پریس کانفرنس کے بعد صدر ایردوان نے بوسنیا و ہرزیگووینا صدارتی کونسل کے چیئرمین دودِک اور رکن ظفرووِچ کو سرکاری عشائیے میں مدعو کیا۔

تبصرے
Loading...