درخت لگانے کے قومی دن کے مطالبے پر صدر ایردوان کا جواب

0 549

ترکی میں جلد ہی شجر کاری کی چھٹی منائی جائے گی کیونکہ صدر رجب طیب ایردوان سمیت حکام نے ٹوئٹر پر وائرل ہونے والی ایک اپیل کے بعد ملک بھر میں درخت لگانے کے لیے پورا دن مخصوص کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

شجر کاری کے لیے ایک دن مخصوص کرنے کا مطالبہ انس شاہین نے کیا تھا جنہوں نے ٹوئٹر پر ایک پیغام میں سب سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ اس منصوبے میں شامل ہو جائیں۔

"ایک خیال آیا ہے۔ کیوں نہ ایک "شجر کاری تعطیل” منائی جائے؟ ملک کے 82 ملین عوام کے لیے شجر کاری کا ایک دن مختص کردیں۔ دنیا کے سامنے ایک مثال قائم کریں اور آنے والی نسلوں کے لیے ایک سرسبز ملک چھوڑیں،” شاہین نے اپنی پوسٹ میں کہا کہ جو جلد ہی وائرل ہوگئی اور ترک حکام کی توجہ بھی حاصل کرلی کہ جن میں کم عمر ترین ڈپٹی رمیسہ قادق بھی شامل ہیں۔

"ایک یہ زبردست آئیڈیا ہے۔ یہ کل ہمارے ایجنڈے پر ہوگا،” رمیسہ نے شاہین کے پیغام کے جواب میں کہا کہ جسے ٹوئٹر پر 55 ہزار جوابات مل چکے ہیں۔

رمیسہ نے جلد ہی شاہین سے ملاقات کی اور ٹوئٹر پر ایک اور پیغام دیا کہ جلد ہی ایک اچھی خبر آنے والی ہے۔

"بلاشبہ ہمیں جلد ہی ایک زیادہ سرسبز ترکی بلکہ دنیا کے لیے ایک زبردست خبر سننے کو ملے گی۔”

چند گھنٹے بعد صدر ایردوان نے بھی ایک ٹوئٹر پیغام میں اس مطالبے کا خیر مقدم کیا۔

"یہ ایک زبردست آئیڈیا ہے، انس۔ ہم نے ہمیشہ ایک سرسبز ترکی کے لیے کام کیا ہے اور اسے جاری رکھیں گے۔ میرے دوست اور میں اس کو یقینی بنانے کی ذمہ داری لیتے ہیں کہ ہم شجر کاری کا ایک قومی دن منائیں گے۔” صدر نے کہا اور اشارہ دیا کہ ترکی جلد ہی اس کے لیے ایک دن مختص کرے گا۔

مسلمانوں کے تہوار عید الفطر اور عید الاضحیٰ سے متاثر ہوکر شاہین کہتے ہیں کہ درخت لگانے کے لیے ایک تعطیل کیوں نہ ہو۔ "میں چاہتا ہوں کہ ہم سب درخت لگائیں اور انہیں پانی دیں،” شاہین نے کہا کہ ایک سرکاری تعطیل عوام کو ایک سرسبز ترکی کے لیے پورا دن لگانے کے قابل بنائے گی۔

تبصرے
Loading...