عوام کی خوشی ہماری صحت پالیسیوں کا مرکز ہے، خاتونِ اوّل

0 609

ورلڈ ہیلتھ اسمبلی کے 72 ویں اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے خاتونِ اوّل امینہ ایردوان نے یونیورسل ہیلتھ کوریج کے حوالے سے ترکی کی کامیابی کی جانب توجہ مبذول کروائی اور کہا کہ "اس شعبے میں ہماری کامیابی کی وجہ ‘سب سے پہلے انسان’ کی اپروچ ہے۔ ہم ‘سب سے پہلے انسان’ اور عوام کی خوشی کو اپنی صحت کی پالیسیوں قلب کہتے ہیں۔”

خاتون اوّل امینہ ایردوان نے جنیوا میں ورلڈ ہیلتھ اسمبلی کے 72 ویں سیشن سے "انسانی لحاظ سے اور کمزور حالات میں خواتین، بچوں اور نوعمر افراد کی صحت اور بہبود” کے موضوع پر تقریر کی۔

"ہماری کامیابی ‘سب سے پہلے انسان’ کی اپروچ کا نتیجہ ہے”

دنیا کے مسائل پر توجہ کے حوالے سے ترکی کی تاریخی روایت کی جانب اشارہ کرتے ہوئے خاتون اوّل نے کہا کہ ترکی عالمی ادارۂ صحت کے ساتھ اپنے دہائیوں پرانے تعاون کے نتیجے میں کئی لوگوں کے زخموں پر مرہم رکھنے کے قابل بنا۔

یونیورسل ہیلتھ کوریج کے حوالے سے ترکی کی کامیابی پر توجہ دلاتے ہوئے خاتون اوّل نے کہا کہ "اس شعبے میں ہماری کامیابی کی وجہ ‘سب سے پہلے انسان’ کی اپروچ ہے۔ ہم ‘سب سے پہلے انسان’ اور عوام کی خوشی کو اپنی صحت کی پالیسیوں قلب کہتے ہیں۔”

"ترکی اپنی سرحدوں کے اندر تمام مہاجرین کو صحت کی سہولیات مفت فراہم کرتا ہے”

ترکی میں یونیورسل ہیلتھ کوریج کے نفاذ کے ساتھ ہیلتھ انشورنس رکھنے والی آبادی کی شرح 99.5 فیصد تک پہنچ چکی ہے، جبکہ 8 ارب سے ڈالرز سے زیادہ کی انسانای امداد کے ساتھ وہ مجموعی مقامی پیداوار کے لحاظ سے دنیا کے "سب سے سخی” ملک کا اعزاز رکھتا ہے۔

ترکی اپنی سرحدوں میں موجود مہاجرین کو مفت صحت کی سہولیات فراہم کرنے والے چند ممالک میں سے ایک کی حیثیت رکھتا ہے جس پر امینہ ایردوان نے زور دیا کہ ترکی، جو اب 40 لاکھ مہاجرین کا مسکن ہے، دنیا کے نازک جغرافیوں میں لوگوں کو درپیش مسائل کا حل ڈھونڈنے کا کافی تجربہ اور معلومات حاصل کر چکا ہے۔

تبصرے
Loading...