غیر ملکی میڈیا کو ترکی کے قواعد و ضوابط کا احترام کرنا ہو گا: ترک وزارت خارجہ

0 779

وزارت خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ وائس آف امریکہ (VOA) اور ڈوئچے ویلے (DW) جیسے عالمی خبر رساں اداروں کو ترکی کے قوانین کا اسی طرح احترام کرنا چاہیے جس طرح ترک میڈیا ریاستہائے متحدہ کے مقامی ضابطوں کی پابندی کر رہا ہے۔

جمہوریت 101: جمہوریت کے لیے آزادی اظہار ضروری ہے اور اسی طرح قانون کی حکمرانی بھی ضروری ہے۔

اظہار رائے کی آزادی کی اجازت دینے کے لیے ضابطے موجود ہیں مگر چیزوں کو کوکوفونی میں تبدیل کرنے کے لیے نہیں”۔ یہ بات تنجو بلگیچ نے امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان نیڈ پرائس کے جواب میں سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر کہا۔

پرائس نے ایک دن پہلے کہا تھا کہ امریکہ نے ویب سائٹس تک رسائی کو روکنے کے ترکی کے فیصلے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے مزید کہا کہ "آزاد پریس ایک مضبوط جمہوریت کے لیے ضروری ہے۔”

ترکش براڈکاسٹنگ اتھارٹی (RTÜK) نے گزشتہ ہفتے DW اور VOA کی ویب سائٹس کو لائسنسوں کے لیے درخواست نہ دینے پر بلاک کر دیا ہے جن کی انہوں نے عالمی خبر رساں اداروں سے درخواست کی تھی۔

ترکی کے نئے ضابطے کے مطابق، آن لائن مواد فراہم کرنے والوں کو ملک میں نشریات جاری رکھنے اور RTÜK کے رہنما خطوط کی تعمیل کرنے کے لیے ایک نیا لائسنس حاصل کرنے کی ضرورت ہے۔

آن لائن سٹریمنگ سروسز Netflix اور Amazon Prime Video نے 2020 کے آخر میں RTÜK آن لائن براڈکاسٹنگ کے نئے قوانین کی تعمیل کرتے ہوئے لائسنس حاصل کیے تھے۔

تبصرے
Loading...
%d bloggers like this: