وزیرِ داخلہ ترک عوام کی سپورٹ پر شکر گزار، کام جاری رکھنے کا عہد

0 868

وزیرِ داخلہ سلیمان سوئیلو، جن کا استعفیٰ اتوار کو صدر رجب طیب ایردوان نے مسترد کر دیا تھا، کہا ہے کہ وہ عوام اور صدر کی سپورٹ پر شکر گزار ہیں اور عہد کیا کہ وہ "قوم کی خدمت کے لیے کام جاری رکھیں گے۔”

پیر کو اپنے آفیشل ٹوئٹر اکاؤنٹ پر بیان جاری کرتے ہوئے سوئیلو نے کہا کہ وہ عوام اور صدر کے ردعمل پر "شکر گزار” ہیں، جنہوں نے ان کے استعفے کے اعلان کے بعد بھی ان کی سپورٹ کی۔

انہوں نے کہا کہ اپنی غلطی کو درست کرنے کے لیے دوسرا موقع دیے جانے کا مطلب ہے ان کی ذمہ داری دوگنی ہو گئی ہے، کیونکہ انہوں نے قوم کی خدمت جاری رکھنے کا عہد کیا ہے۔

کئی سیاست دانوں، معروف شخصیات اور عوام نے سوئیلو کے استعفے کی مخالفت کی، اور کہا کہ وہ اس عہدے کے اہل ہیں اور اب تک اپنی ذمہ داریاں بخوبی انجام دے رہے ہیں۔ صدارتی کمیونی کیشنز ڈائریکٹر نے سوئیلو کے استعفے کے بعد کہا کہ صدر نے ان کا استعفیٰ قبول نہیں کیا، اور یوں سوئیلو اپنی ذمہ داریاں جاری رکھیں گے۔

بیان میں کہا گیا کہ "سلیمان سوئیلو، جنہیں 15 جولائی کی ناکام بغاوت کوشش کے فوراً بعد وزیر داخلہ مقرر کیا گیا تھا، نے اب تک اپنے بھرپور کام کی وجہ سے خوب عوام کی جانب سے خوب سراہے گئے ہیں۔”

بیان میں ترکی میں دہشت گرد تنظیموں کی صلاحیتوں کو بڑی حد تک محدود کرنے میں اور ساتھ ساتھ قدرتی آفات جیسا کہ زلزلوں وغیرہ میں سوئیلو کے کردار کو سراہا گیا۔

اس میں کروناوائرس کی وباء کے خلاف گزشتہ ایک ماہ میں وزیر داخلہ کی کامیابی کا بھی حوالہ دیا گیا، اور یقینی بنایا گیا کہ پبلک سکیورٹی مین کوئی مسائل نہیں اور اینٹی-وائرس کوششیں کامیابی کے ساتھ کی گئیں۔

کئی ترک شہریوں نے استعفے کے اعلان کے بعد سوشل میڈیا کا رخ کیا اور سوئیلو کی زبردست حمایت کا اظہار کیا اور مطالبہ کیا کہ وہ اپنی ذمہ داریاں جاری رکھیں۔

سوئیلو نے اتوار کی شام وِیک اَینڈ یعنی اختتامِ ہفتہ پر لگائے گئے کرفیو کے اعلان پر استعفیٰ دیا، جس کے بعد ترکی بھر میں ڈھائی لاکھ افراد نے دکانوں اور بیکریوں کا رخ کیا۔

اس کے بعد انہوں نے کہا کہ "کرفیو کے بعد پیدا ہونے والے حالات کی تمام تر ذمہ داری میرے اوپر عائد ہوتی ہے۔”

ترکی نے COVID-19 کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے روزہ مرہ زندگی پر کافی پابندیاں لگائیں۔ بحران پر فوری ردعمل دکھانے سے متاثرہ افراد کی تعداد کم ہوئی، جس میں عوام کی نقل و حرکت کو محدود کرنا شامل تھا، خاص طور پر اختتامِ ہفتہ پر۔

تبصرے
Loading...