شمال مشرقی ترکی میں ‏PKK کے خلاف نیا آپریشن شروع

0 252

ترکی نے شمال مشرقی صوبہ حقاری میں انسداد دہشت گردی کے نئے آپریشن کا آغاز کر دیا ہے جس کے دوران پیرکو ‏PKK کے تین دہشت گرد مارے گئے، جس کی تصدیق وزارتِ داخلہ نے کی ہے۔

آپریشن کو حقاری کے کوہِ سیلو کے نام پر "Lightning-Cilo 2” کا نام دیا گیا ہے۔ یہ دہشت گرد فضائی مدد سے کیے گئے ایک آپریشن میں مارے گئے۔

ایک تحریری بیان میں وزارت نے مزید کہا کہ اتوار کو شروع ہونے والے آپریشن کا ہدف ‏PKK کا اور علاقے میں باقی رہ جانے والے دہشت گردوں کا مکمل خاتمہ ہے۔ یہ بھی کہا گیا ہے کہ علاقے میں دہشت گردوں کے خلاف آپریشن بلاتوقف جاری رہے گا۔

آپریشن میں کُل 1,106 سکیورٹی اہلکار شامل ہیں جن میں کمانڈوز، اسپیشل فورسز اور مقامی سکیورٹی ٹیمیں شامل ہیں۔

ترکی کی سکیورٹی فورسز مشرقی اور جنوب مشرقی صوبوں میں انسدادِ دہشت گردی کے آپریشنز کرتی رہتی ہیں کہ جہاں ‏PKK اپنے گڑھ بنانے کی کوشش کرتی ہے۔

اس سے قبل ترکی نے کیران اور قاپان آپریشنز کیے تھے جن سے ‏PKK دہشت گردوں کی تعداد 2016 ء میں 3,000 سے گھٹ کر صرف 492 رہ گئی۔

اگست 2019ء میں ترکی نے ‏YPG/PKK دہشت گردوں کے خلاف جنوب مشرقی صوبوں وان، حقاری اور شیرناک میں آپریشن کیران کا آغاز کیا تھا۔ جس کے بعد اسی مہینے میں ماردین، شیرناک اور بتمان کے صوبوں میں آپریشن کیران-2 شروع ہوا۔ ترکی نے فروری میں جنوب مشرقی صوبہ ماردین میں آپریشن قاپان بھی شروع کیا۔

سکیورٹی فورسز نے ملک بھر میں اپنے آپریشنز کے لیے "دہشت گردی کو اس کے گڑھ میں ختم کرنے” اور "دفاع کے بجائے حملہ” کی حکمتِ عملیاں اپنائی۔

اس حوالے سے ترکی نے دہشت گرد تنظیموں کے اراکین کو ہتھیار ڈالنے پر آمادہ کرنے کی کوششیں بھی کیں، جس کے لیے ان کے اہلِ خانہ کو استعمال کیا گیا۔

وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ ترکی کے کامیاب آپریشنز اور حکمت عملیوں کے نتیجے میں ملک اور بیرونِ ملک ‏PKK کا زوال ہو چکا ہے۔ مشتبہ دہشت گردوں کی بڑی تعداد ‏PKK کو چھوڑ کر ہتھیار ڈال چکی ہے۔ رواں سال کے آغاز سے اب تک کم از کم 100 دہشت گرد ہتھیار ڈال چکے ہیں جبکہ کئی دہشت گرد گروپ کو چھوڑنے سے خوفزدہ ہیں کیونکہ پکڑے جانے کی صورت میں انہیں سخت تشدد اور سزا کا خوف ہے۔

ترکی کے خلاف 40 سال سے زیادہ عرصے سے جاری دہشت گردی میں PKK عورتوں اور بچوں سمیت 40,000 افراد کو موت کے گھاٹ اتارنے کی ذمہ دار ہے۔ تنظیم کو ترکی، امریکا اور یورپی یونین دہشت گرد قرار دے چکے ہیں۔ ‏YPG اسی PKK کی شامی شاخ ہے۔

تبصرے
Loading...