بے گھروں کو گلے لگانا، استنبول کے امام مسجد نے دل جیت لیے

0 1,490

استنبول کے امام مسجد نے مسجد کے وضو/طہارت خانے کے دروازے ایک پیغام لگایا جس ایک رات کے اندر امام غوکرام کو عثمان غوکرام بنا دیا۔ دلچسپ بات ہے کہ انہیں معلوم ہی نہیں کہ انہیں رات سے سوشل میڈیا پر موضوع بنایا جا رہا ہے۔ پیغام میں بے گھروں کو کہا گیا ہے کہ اگر انہیں ضرورت ہو تو وہ صابن اور پانی مفت استعمال کر سکتے ہیں

پیغام میں مزید کہا گیا ہے، "کوئی تمہیں شرابی یا نشئی کہہ سکتا ہے لیکن جو کچھ آپ پر بیتا ہے اس کے ہم ذمہ دار ہیں۔ مہربانی کر کے ہمیں معاف کر دیجئے گا”۔

غوکرام 2003ء سے استنبول کے بیولو شہر کی مسجد سلیمی خاتون کے امام ہیں۔ ان کے بارے معروف ہے کہ وہ غرباء کا خیال رکھتے ہیں۔ "میں نے ایک یتیم کے طور پر پرورش پائی اور میں غرباء کو بخوبی سمجھ سکتا ہوں۔ میں نے یہاں دو سال قبل یہاں گرم پانی کا ہیٹر لگوایا اور صابن اور شیمپو مہیا کرنا شروع کیا۔ جب مجھے معلوم ہوا کہ مسجد کے پاس بے گھر لوگ بھی آتے ہیں تو میں نے پیغام دیا کہ وہ یہاں نہا سکتے ہیں اور میں نے انہیں یہ بھی پیغام دیا کہ اگر انہیں مزید کچھ چاہیے ہو تو وہ میرے دروازے کی گھنٹی بجا سکتے ہیں”۔ انہوں نے مسجد کے ساتھ ملحق اپنے چھوٹے سے کمرے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا۔

انہوں نے مزید بتایا کہ "میں یہاں بہت سے بے گھروں کو جانتا ہوں اور اکثر ان سے گپ شپ کرتا ہوں۔ وہ اداس زندگی جیتے ہیں اور تلخ کہانیاں رکھتے ہیں جسے سن کر ہماری آنکھوں میں آنسو آ جائیں۔ بحیثیت معاشرہ ان کے مسائل سننے کے ہم ذمہ دار ہیں۔ میں ان کی زندگی بدلنے کے لیے اپنی طرف سے تھوڑی سی کوشش کرتا ہوں”۔

سوشل میڈیا صارفین نے غوکرام کی تعریف کی اور کہا کہ آپ نے ہمیں بتایا کہ انسانیت کیا ہوتی ہے۔ جب کہ کچھ نے کہا کہ امام مسجد کی مثال لے کر باقی مساجد بھی اپنے وسائل بے گھروں کے لیے کھول دیں۔

تبصرے
Loading...