ترک نژاد جرمن فٹ بالر نے رزق کے احترام کی مثال قائم کر دی

0 1,813

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ترک نژاد جرمن فٹ بالر مسعود اوزیل نے میچ کے دوران رزق کی حرمت کی قابل تقلید مثال قائم کردی۔  یہ واقعہ برطانیہ میں ہونے والی یورپا لیگ میں آرسنل اور اٹلیٹکو میڈرڈ کے درمیان سیمی فائنل کے دوران پیش آیا جس کی ویڈیو بھی سامنے آگئی۔ آرسنل کی نمائندگی کرنے والے مسعود اوزیل پر مخالف کلب کے تماشائی نے ڈبل روٹی کو ٹکرا پھینکا۔

مسعود ٹھٹک کر رک گئے۔ پھر وہ آگے بڑھے انہوں نے روٹی کے ٹکرے کو اٹھایا، اسے چوما، ماتھے سے لگایا اور پھر احتراما میدان سے باہر کونے میں رکھ دیا۔

پہلے تو تماشائیوں کو سمجھ نہ آیا کہ مسعود نے ایسا کیوں کیا۔ لیکن بعد میں وضاحت ہوئی کہ مسعود نے اسلامی تعلیمات کے مطابق یہ عمل کیا ہے کیونکہ دین اسلام میں رزق کی بہت اہمیت ہے اور اس کے ضیاع کو گناہ قرار دیا گیا ہے۔

مسعود کی یہ ویڈیو دنیا بھر میں وائرل ہوگئی اور ان کے اس عمل کو انتہائی پسندیدگی کی نگاہ سے دیکھا گیا۔ آرسنل اور اٹلیٹکو میڈرڈ کے درمیان ہونے والے سیمی فائنل ایک ایک سے برابر ہوگیا۔

مسعود اوزیل کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ وہ اپنے میچ سے پہلے قرآن کی تلاوت کرتے ہیں۔ جرمن میڈیا کو ایک انٹرویو میں مسعود اوزیل نے کہا تھا کہ وہ میدان میں اترنے سے پہلے ہمیشہ تلاوت کرتے اور دعا مانگتے ہیں، اس دوران ان کے ساتھی بھی ان سے بات نہیں کرسکتے۔ وہ رمضان کے روزے بھی رکھتے ہیں اور 2016 میں عمرے کی سعادت بھی حاصل کرچکے ہیں- مصدر ایکسپریس

 

تبصرے
Loading...