جب تک دفاعی صنعت کو غیر ملکی انحصار سے آزاد نہیں کروا لیتے، ہماری سرمایہ کاری جاری رہے گی، صدر ایردوان

ترکی حوالے سے منافقانہ طرزِ عمل کو دیکھتے ہوئے ہم نے اپنی تیاریاں مزید تیز کر دی ہیں

0 397

اے400 ایم ہوائی جہاز کی ڈی-لیول مینٹی نینس اور رپیئر تنصیبات اور مرمت شدہ پہلے اے400 ایم طیارے کی حوالگی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر ایرودان نے کہا کہ "جب تک ہم اپنی دفاعی صنعت کو غیر ملکی انحصار سے آزاد نہیں کروا لیتے، ہماری سرمایہ کاری جاری رہے گی۔ کیونکہ ترکی نے ہتھیاروں، گولا بارود اور فوجی ساز و سامان کے لیے ماضی میں غیر ملکی انحصار کی بہت بھاری قیمت ادا کی ہے۔”

صدر رجب طیب ایردوان اے400 ایم طیارے کی ڈی-لیول مینٹی نینس اور رپیئر تنصیبات کی افتتاحی تقریب، پہلے مرمت شدہ اے400 ایم طیارے کی حوالگی اور اسٹریٹجک تعاون ے معاہدوں کی تقریب سے بذریعہ وڈیو کانفرنس خطاب کیا۔

اس امر پر زور دیتے ہوئے کہ ترکی دفاعی صنعت میں غیر ملکی انحصار سے مکمل چھٹکارا پانے تک اپنی سرمایہ کاریاں جاری رکھے گا اور یہ کہ اس نے ماضی میں ہتھیاروں، گولا بارود اور فوجی ساز و سامان کے لیے غیر ملکی انحصار کی بہت بھاری قیمت ادا کی ہے، صدر ایردوان نے کہا کہ

"ہم اُن پابندیوں، من مانی حرکتوں، دباؤ ، یہاں تک کہ دھمکیوں کو کبھی نہیں بھلا سکتے کہ جن کا سامنا ہمیں ماضی میں قبرص امن آپریشن کی وجہ سے کرنا پڑا۔ جن جہازوں کی ہم نقد ادائیگی کر چکے ہیں ان کی فراہمی تو کجا، وہ جہاز جو ہم نے مرمت اور دیکھ بھال کے لیے بھیجے تھے وہ بھی تین سال تک ہمیں واپس نہیں کیے گئے کیونکہ ہم ترک قبرص کے شانہ بشانہ کھڑے تھے۔ یہی نہیں بلکہ ترکی سے جبراً ان جہازوں کو کھڑا کرنے کا معاوضہ تک لیا گیا۔”

ترکی کو تقریباً چار دہائیوں سے دہشت گردی کے خلاف جاری جنگ میں بھی ایسی صورت حال سے دوچار کیا گیا جو اتحاد کی روح کے خلاف ہے، اس جانب اشارہ کرتے ہوئے صدر ایردوان نے کہا کہ وہ ہتھیار جو ترکی کو نہیں دیے گئے، وہ شام میں داعش کے خلاف لڑائی کے نام پر دہشت گردوں کو فراہم کیے گئے۔ "ہمارے نام نہاد دوستوں نے اپنے شہریوں کو محفوظ بنانے کے لیے ہمارے سرحد پار آپریشنز کی بیخ کنی کے لیے کوئی کسر نہیں چھوڑی۔ سرخ قالین بچھا کر دہشت گرد تنظیموں کے سرغنوں کے استقبال کیے، جیسے وہ کوئی قانونی سیاست دان ہیں۔ ہم آج بھی ایسا ہی ہوتا دیکھ رہے ہیں۔ اپنے ملک کے حوالے سے اس منافقانہ طرزِ عمل کو دیکھتے ہوئے ہم نے اپنی تیاریاں مزید تیز کر دی ہیں۔”

تبصرے
Loading...