عفرین آپریشن میں اسٹریٹجک اہمیت کا حامل راجو ٹاؤن دہشتگردوں سے آزاد

0 1,156

ترک فوج نے مقامی آزاد شامی فوج کی مدد سے اسٹریٹجک اہمیت کے حامل راجو ٹاؤن کو پی کے کے کی شامی شاخ کرد دہشتگرد تنظیم وائے پی جی سے آزاد کروا لیا ہے۔

راجو ٹاؤن عفرین صوبے کے مرکز سے 25 کلومیٹر کے فاصلے پر موجود ہے۔ آخری اطلاعات تک ترک فوج اور دہشتگردوں کے درمیان چھڑپیں جاری تھیں۔ جبکہ دوسری طرف مائنز کی تلاش اور ناکارہ بنانے کا عمل بھی جاری ہے۔

راجو دوسرا بڑا ٹاؤن ہے جو آپریشن شاخ زیتون کے دوران دہشتگردوں سے آزاد کروایا گیا ہے۔ اس قبل بلبل ٹاؤن جیسا بڑا ٹاؤن آزاد کروایا گیا تھا۔

آپریشن کے آغاز سے اب تک ترک فوج اور آزادی شامی فوج 121 اہم مقامات کو دہشتگردوں سے آزادی دلا چکی ہے جن میں عفرین کے 9 قصبے، 97 گاؤں، 7 چھوٹے دیہات، 11 اہم پہاڑی مقامات اور ایک وائے پی جی/پی کے کے بیس کیمپ شامل ہے۔

پریشن شاخِ زیتون ترکی کی طرف سے شامی صوبہ عفرین میں پی کے کے/پی وائے ڈی/وائے پی جی/کے سی کے اور داعش کے دہشتگردوں کے خلاف 20 جنوری کو شروع کیا گیا تھا۔

ترک جنرل اسٹاف کے مطابق آپریشن کا مقصد ترک سرحدوں کے ساتھ خطے میں سیکورٹی اور استحکام قائم کرنا ہے اور اس کے ساتھ ساتھ دہشتگردوں کے ظلم اور بربریت سے شامی عوام کو تحفظ فراہم کرنا ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ یہ آپریشن بین الاقوامی قانون اور یو این سیکورٹی کونسل کے قراردادوں کے فریم ورک کے اندر رہتے ہوئے ترکی کے حقوق کے تحت ہو رہا ہے۔ اقوام متحدہ کے چارٹر کے مطابق کسی بھی ملک کو اپنے دفاع کے لیے قدم اٹھانے کا حق ہے تاہم اس سلسلے میں شام کی سالمیت کا احترام کیا جائے گا۔

ملٹری نے کہا ہے کہ یہ بات "انتہائی اہمیت” رکھتی ہے کہ اس آپریشن میں کسی سویلین کو نقصان نہ پہنچے۔

تبصرے
Loading...