کتابوں، میگزین اور اخباروں پر اب کوئی ٹیکس نہیں ہو گا، صدر ایردوان

0 1,026

ترک صدر رجب طیب ایردوان نے استنبول میں اتاترک مرکز ثقافت کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے آرٹس اور ثقافت بارے خوشخبری سنائی، "اس ہفتے پارلیمنٹ میں ایک قانون بارے بحث کی گئی ہے، جس کے تحت کتابوں اور پیروڈکل کو ٹیکس سے آزاد کیا جائے گا اس سے ناشران اور فروخت کنندگان کو بھی کوئی ٹیکس ادا نہیں کرنا پڑے گا۔ اس کو زیادہ واضع کر کے کہیں تو کتابوں، میگزین اور اخباروں پر اب کوئی ٹیکس نہیں ہو گا”۔

استنبول میں ایک پرشکوہ یادگار بنائی جا رہی ہے

صدر ایردوان نے کہا کہ "ہم بھرپور محنت کریں گے اور صرف دو سالوں میں اتاترک مرکز ثقافت کو مکمل کریں گے”۔ مزید کہا، "ہم تاریخ، تہذیب اور ثقافت کے دارالحکومت، استنبول میں ایک پرشکوہ یادگار بنائی جا رہی ہے”۔

صدر ایردوان نے مزید کہا، "ہم ایک ایسی یادگار تعمیر کررہے ہیں جو اندھیروں کے بیوپاریوں کے مقابلے میں ہمارے ملک کے روشن مستقبل کی علامت ہو گی۔ اتاترک مرکز ثقافت لوگوں کی اقدار کے مخالف پیدا ہونے والی جیکوبن ذہنیت کے مقابلے میں ایک فتح ہو گی”۔

کتابیں اور مجلے اب ٹیکس فری ہوں گے

ترک صدر نے خوشخبری سناتے ہوئے کہا، "اس ہفتے پارلیمنٹ میں ایک قانون بارے بحث کی گئی ہے، جس کے تحت کتابوں اور پیروڈکل کو ٹیکس سے آزاد کیا جائے گا اس سے ناشران اور فروخت کنندگان کو بھی کوئی ٹیکس ادا نہیں کرنا پڑے گا۔ اس کو زیادہ واضع کر کے کہیں تو کتابوں، میگزین اور اخباروں پر اب کوئی ٹیکس نہیں ہو گا”۔

جامع مسجد تقسیم کی تعمیراتی جگہ کا دورہ

تقسیم اسکوائر پر اتاترک مرکز ثقافت کی افتتاحی تقریب کے بعد ترک صدر ایردوان نے جامع مسجد تقسیم کی تعمیراتی جگہ کا دورہ کیا۔ اس موقع پر انہوں نے مزدورں کے ساتھ تصاویر بنوائیں اور انہیں کھانے کے لیے خشک میوے دئیے۔

تبصرے
Loading...