ترک ڈراموں کے شائقین کو ترک سفارتخانہ اسلام آباد میں ڈرامہ دکھائے گا

0 1,083

ترک ڈراموں کے شائقین کے لیے ترک سفارت خانہ اسلام آباد میں "میرا باپ اور بیٹا” (Babam ve Oglum) نامی معروف ڈرامہ سکرین کرے گا۔ یہ ڈرامہ پاکستان نیشنل کونسل آف آرٹس کے تعاون سے ہر ماہ سال رواں کے آخر تک انگلش سب ٹائٹل کے ساتھ دکھایا جائے گا۔

ڈرامے کا پہلا حصہ 30مارچ 2018ء کو شام ساڑھے چھ بجے پاکستان نیشنل کونسل آف آرٹس آڈیٹوریم، اسلام آباد میں دکھایا جائے گا۔ ڈرامے میں ترک سفیر احسان مصطفےٰ یرداکل بھی شرکت کریں گے اور شائقین کو ڈرامے کے بعد ترک کھانے اور مشروب بھی پیش کیے جائیں گے۔

"میرا باپ اور بیٹا” کی کہانی بائیں بازو کے صحافی کے گھرانے کی ہے جو 1980ء کے ترک فوجی مارشل لاء کے بعد ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہے۔ صادق ایک باغی نوجوان ہے جو یونیورسٹی سطح پر سیاسی طور پر سرگرم رہا تھا اور 70ء میں بائیں بازو کا صحافی بن گیا۔ اگرچہ اس کے والد کی خواہش تھی کہ اسے ایگریکلچر انجینیئر بنوائے اور ایجیئن گاؤں میں خاندانی زراعت سنبھال لے۔

21 ستمبر 1980ء کی شام جب ترکی پر فوجی مارشل لاء لاگو ہو رہا تھا انہیں ہسپتال اور ڈاکٹر تک نہ پہنچ سکے اور اس کی بیوی زچگی کے بعد فوت ہو گئی۔ ان کا اکلوتا بیٹا دینز پیدا ہوا۔ ایک طویل تشدد، ٹرائل اور قید کے بعد صادق اپنے 7-8 سال کے بیٹے دینز کے ساتھ واپس گاؤں پہنچا اور اسے اپنے باپ حسین کو معاملات سمجھانے میں مشکل پیش آتی ہے۔

اسلام آباد میں سکرین کی جانے والے پہلے حصے کا وقت 108 منٹ ہو گا۔

تبصرے
Loading...