زوال پذیر ہیلتھ کیئر سسٹمز کے اِس دور میں ترکی اور جاپان نے مثالی کامیابی ظاہر کی ہے، صدر ایردوان

0 300

باشاک شہر چام اور ساکورا سٹی ہسپتال کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر ایردوان نے کہا کہ "ایک ایسے دور میں جب دنیا بھر میں ہیلتھ کیئر سسٹمز زوال پذیر ہیں، ترکی اور جاپان نے مثالی کامیابی ظاہر کی ہے۔ مریضوں اور اموات کی تعداد اور ہیلتھ کیئر سسٹم کے ہموار انداز میں کام کرنے کے حوالے سے ہم بخوبی کام کر رہے ہیں۔”

صدر رجب طیب ایردوان نے باشاک شہر چام (پائن) اور ساکورا سٹی ہسپتال کا افتتاح کیا اور اس موقع پر تقریب سے خطاب کیا، جس میں وزیر اعظم جاپان شنزو ایبے نے بھی بذریعہ وڈیو کانفرنس شرکت کی۔

"ہم نے طویل اور کثیر الجہتی ترکی-جاپان دوستی میں ایک نئے ربط کا اضافہ کیا ہے”

تقریب میں شرکت پر وزیر اعظم جاپان ایبے کا شکریہ ادا کرتے ہوئے صدر ایردوان نے ہسپتال کی تعمیر میں ان کے حصے پر شکریہ ادا کیا۔

مامرہ اور عثمان غازی پُل جیسے بڑے انفرا اسٹرکچر منصوبوں کو یاد کرتے ہوئے کہ جو جاپانی کمپنیوں کے ساتھ مل کر بنائے گئے تھے، صدر ایردوان نے کہا کہ "آج ہم نے طویل اور کثیر الجہتی ترکی-جاپان دوستی میں ایک نئے ربط کا اضافہ کیا ہے۔ ہم نے ہسپتال کو "باشاک شہر چام اور ساکورا شہر ہسپتال” کا نام دیا ہے جو دونوں ملکوں کے درمیان تعاون کے لحاظ سے موزوں ہے۔”

صدر ایردوان نے زور دیا کہ ‏Rönesans اور ‏Sojitz کی جانب سے مشترکہ طور پر بنایا گیا یہ ہسپتال ترکی اور جاپان کے باہمی تعاون اور اتحاد کی علامت ہے۔

"استنبول ہیلتھ کیئر کا بین الاقوامی مرکز بن چکا ہے”

ہسپتال کا کمپلیکس 10,21,000 مربع میٹرز کے تعمیر شدہ علاقے اور 7,89,000 مربع میٹر کی کُل زمین پر پھیلا ہوا ہے اور دنیا کے بڑے ہسپتالوں میں سے ایک ہے، یہ بتاتے ہوئے صدر ایردوان نے کہا کہ ماحول دوست اور توانائی بچت کرنے والا ہسپتال کُل 2,682 بستروں اور 456 انتہائی نگہداشت کے یونٹس، 725 پولی کلینک کمروں اور 90 آپریشن تھیٹرز کی گنجائش رکھتا ہے اور COVID-19 کے خلاف جنگ میں ایک اہم کردار ادا کرے گا۔

مزید کہتے ہوئے کہ یہ ہسپتال 107 شعبوں میں خدمات انجام دے گا، صدر ایردوان نے کہا کہ یہ ہسپتال غیر ملکی مریضوں کا بھی علاج کرے گا کیونکہ یہ استنبول ایئرپورٹ کے قریب واقع ہے۔ "استنبول اب ہیلتھ کیئر کا بین الاقوامی مرکز بن چکا ہے۔”

عالمی وباء کے خلاف جنگ میں ملک کو درپیش بڑی مشکلات پر روشنی ڈالتے ہوئے صدر نے کہا کہ "ترکی اب تک 82 ممالک کو طبی سامان فراہم کر چکا ہے اور آئندہ بھی ایسا کرتا رہے گا۔”

صدر ایردوان نے کہا کہ "کیونکہ یہ ہماری انسانی ذمہ داری ہے اور ہمارے ضمیر کی آواز بھی ہے۔ اور ہمیں اس پر فخر ہے۔ ایک ایسے دور میں جب دنیا بھر میں ہیلتھ کیئر سسٹمز زوال پذیر ہیں، ترکی اور جاپان نے مثالی کامیابی ظاہر کی ہے۔ مریضوں اور اموات کی تعداد اور ہیلتھ کیئر سسٹم کے ہموار انداز میں کام کرنے کے حوالے سے ہم بخوبی کام کر رہے ہیں۔ روزانہ سامنے آنے والے کیسز کی تعداد کل سے صفر ہو چکی ہے۔ تمام اشاریے مثبت پیش رفت کی جانب اشارہ کر رہے ہیں۔”

وزیر اعظم جاپان کے دلچسپی دکھانے پر ایک مرتبہ پھر اُن شکریہ ادا کرتے ہوئے صدر ایردوان نے COVID-19 کی وباء میں جان دینے والے والوں جاپانیوں کے حوالے اُن سے تعزیت کی۔

تبصرے
Loading...