ترکی اور آرمینیا تعلقات کو معمول پر لانے کے لیے سفارتی نمائندے مقرر کر دیے

0 111

ترکی اور آرمینیا حالات کو معمول پر لانے کے لیے اقدامات پر مذاکرات کی خاطر خصوصی سفارتی نمائندے مقرر کریں گے، جس کا اعلان ترک وزیر خارجہ مولود چاؤش اوغلو نے کیا ہے۔

پارلیمان میں اپنی وزارت کے بجٹ مذاکرات کے دوران مولود نے بتایا کہ دونوں ممالک استنبول اور یریوان کے درمیان چارٹر پروازوں کا آغاز بھی کریں گے۔

آرمینیا اور ترکی نے 2009ء میں تعلقات کی بحالی اور دہائیوں کے بعد مشترکہ سرحد کھولنے کے لیے ایک تاریخی امن معاہدے پر دستخط کیے تھے، لیکن اس معاہدے کی توثیق نہ ہو سکی اور تعلقات بدستور کشیدہ رہے۔

گزشتہ سال نگورنو-قراباخ کی جنگ کے دوران انقرہ نے کھل کر آذربائیجان کی حمایت کی اور آرمینیا پر الزام لگایا کہ وہ آذری علاقوں پر قبضہ جمائے ہوئے ہے۔

مولود چاؤش اوغلو نے کہا کہ ترکی آرمینیا اور آذربائیجان کے مابین تعلقات کو معمول پر لانے کے لیے اقدامات اٹھائے گا۔

تبصرے
Loading...
%d bloggers like this: