ترکی نے امریکہ اور اسرائیل سے سفیر واپس بلا لیے، تین روزہ سوگ کا اعلان

0 2,571

ترکی نے امریکہ کی طرف سے سفارت خانہ بیت المقدس منتقل کرنے اور اسرائیل وحشت و بربریت پر احتجاجاً امریکہ اور اسرائیل سے اپنے سفراء کو واپس بلا لیا ہے-

دوسری طرف ترک حکومت نے ملک میں اسرائیل وحشت و بربریت پر اسرائیل کو دہشتگرد ریاست قرار دیتے ہوئے، 44 شہید فلسطینیوں اور ڈھائی ہزار زخمیوں کے غم میں تین روزہ سوگ کا اعلان کیا ہے-

ترک حکومت نے کہا ہے کہ وہ زخمیوں کی طبی امداد کے لیے غزہ ایمرجنسی کوریڈو کھولے گی اور پرائیویٹ امداد بھی غزہ تک پہنچائے گی جن کی براہ راست غزہ تک رسائی نہیں ہے-

نائب وزیر اعظم نے میڈیا کو بتایا ہے کہ کل بروز منگل پارلیمنٹ کا خصوصی اجلاس طلب کر لیا گیا ہے جو اس معاملے پر غور و غوض کرے گا-

ترک صدر رجب طیب ایردوان نے ترک ملت کو پیغام دیا ہے کہ وہ ایام سوگ کے بعد جمعہ کے روز ینی کبی میدان میں پہنچے جہاں اس معاملے پر ان کی تائید سے بڑے فیصلے اور آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا- انہوں نے او آئی سی رہنماؤں کو بھی جمعہ کے روز استنبول بلانے کا اعلان کیا ہے-

انہوں نے امریکہ اور اسرائیل پر تنقید کرتے ہوئے سوموار کو "خونی سوموار” قرار دیا اور کہا کہ آج کا خون صرف اسرائیلی رہنماؤں ہی نہیں بلکہ امریکی رہنماؤں کے ہاتھوں پر بھی رنگا ہے-

ترک صدر نے اقوام متحدہ کا خصوصی بلوانے کا بھی اشارہ دیا ہے- انہوں نے کہا کہ دنیا کو ردعمل دینا ہو گا کہ ان کے متفقہ فیصلے کو کیسے رد کر کے سفارت خانہ بیت المقدس منتقل کیا گیا ہے-

تبصرے
Loading...