ترکی نے پروازوں کی بحالی کے لیے 92 ممالک کے ساتھ مذاکرات مکمل کر لیے

0 209

ترکی نے ملک میں پروازوں کی بحالی کے لیے 92 ممالک کے ساتھ مذاکرات مکمل کر لیے ہیں۔ یہ بات وزیر ٹرانسپورٹ و انفرا اسٹرکچر عادل قرا اسماعیل اوغلو نےبتائی۔

13 اگست تک ترکی 48 ممالک کے لیے شیڈولڈ اور نان-شیڈولڈ پروازیں چلا رہا ہے۔ان 48 ممالک میں البانیہ، الجزائر، آسٹریا، آذربائيجان، بنگلہ دیش، بیلارس، بیلجیئم، بینن، بوسنیا-ہرزیگووینا، بلغاریہ، کینیڈا، چین، کروشیا، ڈنمارک، مصر، فرانس، جبوتی، جرمنی، یونان، ہانگ کانگ، انڈونیشیا، آئرلینڈ، اسرائیل، اٹلی، آئیوری کوسٹ، اردن، کوسوو، کویت، لبنان، لیبیا، لکسمبرگ، ماریطانیہ، مالڈووا، مراکش، شمالی مقدونیہ، پولینڈ، قطر، روس، سینیگال، سربیا، صومالیہ، سوئیڈن، سوئٹزرلینڈ، نیدرلینڈز، برطانیہ، امریکا، ترک جمہوریہ شمالی قبرص اور یوکرین شامل ہیں۔

قزاقستان کے لیے پروازیں 20 جون سے شروع ہوئی تھیں لیکن وائرس کے کیس بڑھنے کی وجہ سے 4 جولائی کو دوبارہ معطل کر دی گئی تھیں۔ وزیر نے بتایا کہ اب انہیں یکم ستمبر کو بحال کیا جائے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ترکی نے حفظانِ صحت کے اصولوں کو مدنظر رکھتے ہوئے ڈومیسٹک فلائٹ آپریشن بھی دوبارہ شروع کر دیا ہے۔

ترکی میں COVID-19 کے کیسز کی تعداد 2,45,635 ہے جن میں سے 2,28,057 صحت یاب ہو چکے ہیں جبکہ 5,912 افراد کی موت واقع ہوئی۔

دنیا بھر میں اس وائرس کی وباء نے 188 ممالک اور خطوں میں 7,60,000 افراد کی جانیں لیں۔ امریکا، برازیل، بھارت اور روس اس وقت سب سے زیادہ متاثر ہونے والے ممالک ہیں۔

تبصرے
Loading...