ترکی، شامی اپوزیشن کے ساتھ مل کر آفرین میں آپریشن کرے گا، ایردوان کا اعلان

0 2,727

ترک صدر رجب طیب ایردوان نے منگل کے روز کہا ہے کہ ترکی شامی علاقے آفرین میں شامی اپوزیشن کے تعاون سے دہشتگردی کے خلاف آپریشن کرے گا۔

آق پارٹی کے پارلیمانی گروپ اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ترک صدر نے کہا کہ وہ آپریشن بارے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے بات کرنا مناسب نہیں سمجھتے، البتہ روسی صدر ولادیمر پوٹن سے بات چیت جاری رہے گی۔

انہوں نے کہا کہ 30،000 کرد دہشتگردوں کی مضبوط فوج بنانے کا امریکی منصوبہ سرحدی تناؤ کو بڑھانے کا سبب بنے گا، حتی کہ اس منصوبہ پر خود اسد رجیم کا جھکاؤ نہیں ہو گا۔

آق پارٹی اجلاس کے دوران صدر ایردوان نے اعادہ کیا تھا کہ ترکی آفرین اور منبج میں آپریشن کے لیے تیار ہے۔ انہوں نے کہا، "ترکی بہت جلد شام میں دہشتگردی کے تمام گھونسلوں کا صفایا کر دے گا”۔

اتوار کے روز امریکی اتحاد نے شامی جمہوری فوج کے قیام کا اعلان کیا تھا جو کرد دہشتگرد پی کے کے کی شامی شاخ پی وائے جی کی افرادی قوت سے بنائی جائے گی۔

امریکی اتحاد کے اس اعلان پر ترکی، ایران اور روس کی جانب سے سخت ردعمل آیا تھا۔

تبصرے
Loading...