ترکی نے کرونا وائرس کے پہلے مریض کی تصدیق کر دی

0 237

ترکی نے ملک میں کرونا وائرس کے پہلے مریض کی تصدیق کر دی ہے اور کہا ہے کہ متاثرہ شخص ایک ترک شہری ہے جوجسےایک ہسپتال میں isolationیعنی تنہائی میں رکھ دیا گیا ہے۔

وزیرِ صحت فخر الدین خوجہ نے ایک پریس کانفرنس میں کہا ہے کہ یہ شخص یورپ کے سفر کے دوران کرونا وائرس کا شکار بنا۔ انہوں نے ترک شہریوں پر زور دیا کہ وہ بیرونِ ملک سفر نہ کریں اور وطن واپس آنے والے افراد کو 14 دن تک قرنطینہ میں رکھنے کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ مریض کے اہلِ خانہ کو بھی نگرانی میں رکھا جا رہا ہے۔

وزیر نے زور دیا کہ لوگ اس خبر سے گھبرائیں نہیں کیونکہ ملک میں اب بھی یہ وبائی صورت اختیار نہیں کر پایا ہے۔ "کرونا وائرس اتنا مضبوط نہیں ہے کہ ترکی کے اٹھائے گئے اقدامات سے بھی بچ جائے۔”

انہوں نے عوام سے یہ بھی مطالبہ کیا کہ وائرس سے بچاؤ کے لیے احتیاطی تدابیر اختیار کریں۔

قبل ازیں وزیر صحت نے کہا تھا کہ وہ آئندہ دنوں میں وزیرِ تعلیم سے ملاقات کریں گے تاکہ تعلیمی اداروں کی عارضی بندش پر بات کی جا سکے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہو سکتا ہے کہ ترکی سرکاری ملازمین کے غیر ضروری غیر ملکی سفر کو روک دے۔

دنیا بھر میں کرونا وائرس سے ہونے والی اموات 4,000 سے زیادہ ہو چکی ہیں جبکہ 1,14,000 تصدیق شدہ مریض سامنے آ چکے ہیں۔

وائرس چین سے نکلا اور اب تک 100 سے زیادہ ممالک تک پھیل چکا ہے جبکہ عالمی ادارۂ صحت کا کہنا ہے کہ اس کے عالمگیر وباء بننے کے خطرات حقیقی روپ دھار رہے ہیں۔

اس وباء کو روکنے کے لیے چند ملکوں کی حکومتوں نے اپنی سرحدیں بند کر دی ہیں اور متاثرہ ممالک سے زمینی اور فضائی رابطے ختم کر دیے ہیں۔

تبصرے
Loading...