ترکی نے 150 کلومیٹر رینج کا نیوجنریشن کروز میزائل بنا لیا

0 928

ترکی کی دفاعی کمپنی روکٹسان نے اعلان کیا ہے کہ اس نے ایک نیو جنریشن کا کروز میزائل تیار کر لیا ہے جسے زمین، سمندر اور ہوائی پلیٹ فارم سے لانچ کیا جا سکے گا۔ کمپنی نے مزید کہا کہ کروز میزائل، جس کا نام چاکیر (Çakır) ہے، یہ جدید ترین خصوصیات اور موثر وار ہیڈ کے ساتھ ترک افواج کی دفاعی طاقت کو دوگنا کر دے گا۔

کہا گیا ہے یہ ابھی بھی ڈیزائن کے مرحلے میں ہے، اور اس کے پہلے ٹیسٹ اس سال کے آخر میں شیڈول ہیں، اس کے پلیٹ فارم کا انضمام 2023 میں ہو گا۔

یہ ملک کی تاریخی بغیر پائلٹ جنگی فضائی گاڑی (UCAV) Akıncı سے تجربہ کیا جائے گا، جو ترکی کا بنایا ہوا پوسٹ ففتھ جنریشن سب سے زیادہ جدید ترین ڈرون ہے۔

150 کلومیٹر (93 میل) سے زیادہ کی رینج کے ساتھ، کروز میزائل فکسڈ اور روٹری ونگ ہوائی جہاز، حملہ ڈرون، ٹیکٹیکل لینڈ وہیکلز اور بحری پلیٹ فارم سے لانچ کیا جا سکے گا۔

یہ Kale Arge کے تیار کردہ KTJ1750 ٹربو جیٹ انجن سے لیس ہوگا۔

یہ زمین یا سمندر کے اوپر کے اہداف کے ساتھ ساتھ غاروں میں موجود اہداف کے خلاف آپریشنل استعداد بھی فراہم کرتا ہے۔

بیان میں کہا گیا کہ ایک منفرد وارہیڈ اور امپیکٹ پوائنٹ سلیکشن سسٹم کی خصوصیت کے ساتھ یہ انتہائی تباہ کن ہوگا، مزید کہا کہ یہ میزائل اپنے جدید وسط اور ٹرمینل فیز گائیڈنس سسٹم کی بدولت موسمی حالات سے قطع نظر اعلیٰ درستگی کے ساتھ اہداف کو نشانہ بنانے کے قابل ہو گا۔

یہ نیٹ ورک پر مبنی ڈیٹا لنک کی سہولتوں اور آپریشن کے درمیان انسانی دخل اندازی کے ساتھ اپنی صلاحیتوں کو اپ ڈیٹ کرنے، حملہ کرنے/دوبارہ حملہ کرنے، یا پرواز کے وسط میں اہداف کو ختم کرنے کے بھی قابل ہو گا۔

ایک سے زیادہ پے لوڈ لے جانے کی بھی صلاحیت رکھنے والا یہ میزائل ایک غول کے طور پر دوسرے آرڈیننس کے ساتھ ہم آہنگی اور باہمی رابطہ قائم کرنے کے قابل ہو گا۔

تبصرے
Loading...
%d bloggers like this: