ترکی نے فلسطین کے عثمانی دور کی زمینی دستاویزات پیش کر دِیں

0 4,624

ترک حکومت نے فلسطین کے عثمانی دور کی زمینی دستاویزات برقی صورت میں پیش کر دی ہیں۔ فلسطینی میڈیا کے مطابق اِس طرح فلسطینیوں کو اسرائیل کے غیر قانونی قبضے کے خلاف مدد ملے گی۔

36,000 صفحات پر مشتمل اِن دستاویزات میں عثمانی دور میں فلسطینی زمینوں کی ملکیت کی تفصیلات موجود ہیں۔ فلسطین پر عثمانی اقتدار پانچ صدیوں پر محیط تھا۔

یہ دستاویزات ورثہ فلسطین اور اسلامی تحقیقی انجمن (میثاق) کی جانب سے القدس کے علاقے ابو دیس میں محفوظ کی گئی تھیں۔

اسرائیل کی قابض افواج نے فلسطین کے بڑے حصے پر زبردستی قبضہ جما کر غیر قانونی طور پر آبادیاں بنا رکھی ہیں کہ جن میں مغربی کنارے میں 5,00,000 اور مقبوضہ القدس میں 2,20,000 آبادکار مقیم ہیں۔

تبصرے
Loading...