ترکی رمضان کے لیے 25,000 تارکینِ وطن کو واپس لائے گا

0 290

ترکی کروناوائرس کی عالمگیر وباء کے ہوتے ہوئے بھی تقریباً 25 ہزار تارکینِ وطن کو واپس لانے کے لیے تیار ہے تاکہ وہ رمضان کے مقدس ایّام اپنے گھر والوں کے ساتھ گزاریں۔

نائب صدر فواد اوقتائی نے کہا کہ ترکی صحت کے اس بحران میں اپنے عوام کے شانہ بشانہ کھڑا ہے ہے چاہے وہ کہیں بھی مقیم ہوں۔ کئی وزارتیں اور سرکاری ادارے اس عمل کے دوران تعاون کریں گے۔

اوقتائی نے کہا کہ ترک قوم اور ریاست عوام کے تعاون اور مدد سے کروناوائرس کی وباء کا سامنا کرنے کے لیے پُرعزم ہے۔

رمضان 24 اپریل سے شروع ہو رہا ہے۔

کروناوائرس اب تک ترکی میں 1643 لوگوں کی جان لے چکا ہے، جبکہ تصدیق شدہ مریضوں کی تعداد 74 ہزار سے تجاوز کر چکی ہے۔ ملک پہلے ہی بیرونِ ملک رہنے والے لاکھوں ترک شہریوں کو وطن واپس لا چکا ہے۔

گزشتہ سال دسمبر میں ووہان، چین سے نکلنے والے کروناوائرس سے ہونے والا مرض COVID-19 اب تک کم از کم 185 ممالک اور خطوں تک پھیل چکا ہے اور اب اس کا مرکز یورپ اور امریکا ہے۔

اس عالمگیر وباء میں اب تک 1 لاکھ 45 ہزار افراد مارے جا چکے ہیں جبکہ 21 لاکھ 60 ہزار سے زیادہ مریض موجود ہیں۔ لگ بھگ ساڑھے 5 لاکھ افراد اس مرض کا شکار بننے کے بعد صحت یاب بھی ہو چکے ہیں۔

تبصرے
Loading...