ترکی چار مراحل میں اپنے تمام شہریوں کی ویکسینیشن کرے گا، وزیر صحت

0 175

ترکی میں کرونا وائرس کی وباء کے خلاف جاری جدوجہد کے دوران وزیرِ صحت فخر الدین کوجا نے اعلان کیا ہے کہ ترکی چار مراحل میں اپنے تمام شہریوں کی ویکسینیشن کرے گا۔

انہوں نے بتایا کہ "پہلے مرحلے میں صحت کے شعبے سے وابستہ تمام کارکنوں، بزرگ شہریوں، معذوروں اور رش کے ماحول میں رہنے والے لوگوں کو ویکسین دی جائے گی۔”

"دوسرے مرحلے میں ان تمام شہریوں کو ویکسین دی جائے گی جو اہم فرائض انجام دیتے ہیں جیسا کہ معاشرے کے لیے ضروری کام، انتہائی خطرے سے دوچار ماحول میں رہنے والے افراد اور وہ لوگ جو 50 سال کی زیادہ عمر کے ہیں اور کم از کم ایک شدید مرض رکھتے ہیں۔”

بعد ازاں وزیر نے کہا کہ "تیسرے مرحلے میں 50 سال سے کم عمر کے کم از کم ایک شدید مرض رکھنے والے افراد اور نوعمر بالغان کو ویکسین دی جائے گی اور چوتھے اور آخری مرحلے میں باقی تمام شہریوں کی ویکسینیشن کی جائے گی۔”

فخر الدین کوجا پہلے تصدیق کر چکے ہیں کہ صحت کے شعبے سے وابستہ افراد کو 11 دسمبر سے ویکسین دی جائے گی۔ انہوں نے دارالحکومت انقرہ میں ہونے والے پارلیمان کے اجلاس کے دوران ایک سوال پر بتایا تھا کہ "ہمیں دسمبر میں ویکسین کی کم از کم 10 ملین یعنی 1 کروڑ خوراکیں ملیں گی، اور یہ تعداد 20 ملین تک بھی جا سکتی ہے۔ مزید 20 ملین جنوری میں اور 10 ملین فروری میں آئیں گی۔ ہم اس تعداد کو بڑھانا چاہتے ہیں۔”

حکام پہلے ہی بتا چکے ہیں کہ ترکی نے چین سے 50 ملین ویکسین خوراکیں خریدنے کا معاہدہ کر رکھا ہے۔ چینی ویکسین سب کے لیے مفت ہوگی، جبکہ دیگر کمپنیوں اور ملکوں سے آنے والی ویکسین کو دوا خانوں پر فروخت کے لیے پیش کرنے پر غور کیا جا رہا ہے۔

فخر الدین کوجا نے اعلان کیا تھا کہ ترکی جرمنی سے تقریباً 25 ملین خوراکیں لینے کے لیے مذاکرات کر رہا ہے۔

تبصرے
Loading...