ترکی یوکرین کے ساتھ مضبوط معاشی تعلقات کو اہمیت دیتا ہے، صدر ایردوان

0 258

کیف میں یوکرین-ترکی بزنس فورم سے خطاب کرتے ہوئے صدر رجب طیب ایردوان نے کہا ہے کہ ترکی دو طرفہ تعلقات کے علاوہ یوکرین کے ساتھ اپنے معاشی تعلقات کو مضبوط کرنے بھی اہمیت دیتا ہے۔ "یوکرین ہمارے لیے ایک دوست ملک کے ساتھ ساتھ ایک تزویراتی شراکت دار بھی ہے۔ اپنی جغرافیائی حیثیت اور معیشت کی بدولت ترکی اور یوکرین ایک دوسرے کے مقابل نہیں بلکہ مفید شراکت دار ہیں۔”

صدر رجب طیب ایردوان نے کیف میں یوکرین-ترکی بزنس فورم سے خطاب کیا

"ترکی اور یوکرین ایک دوسرے کے مفید شراکت دار ہیں”

دونوں ممالک کے باہمی تعلقات کے علاوہ ترکی ہمیشہ سے یوکرین کے ساتھ اپنے معاشی تعلقات مضبوط کرنے کو اہمیت دیتا ہے، اس حوالے سے صدر ایردوان نے کہا کہ "یوکرین ہمارے لیے ایک دوست ملک ہونے کے ساتھ ساتھ ایک تزویراتی شراکت دار بھی ہے۔ اپنی جغرافیائی حیثیت اور معیشت کی بدولت ترکی اور یوکرین ایک دوسرے کے مقابل نہیں بلکہ مفید شراکت دار ہیں۔” اس حوالے سے ترکی-یوکرین اعلیٰ سطحی تزویراتی کونسل کی اہمیت پر توجہ دلاتے ہوئے صدر ایرودان نے کہا کہ باہمی تعلقات اور علاقائی مسائل پر اس اجلاس کے دوران گفتگو کی گئی اور متعدد معاہدوں پر دستخط کے ساتھ دو طرفہ تعلقات مزید مضبوط ہوئے۔

"ہم دو طرفہ تجارتی حجم کو 2023ء تک 10 ارب ڈالرز تک لے جانے کا ہدف رکھتے ہیں”

نجی شعبے کو جدید دنیا میں معیشت کا اہم محرّک قرار دیتے ہوئے صدر ایردوان نے ترکی اور یوکرین کے مابین 4.8 ارب ڈالرز کے حجم کا حوالہ دیا اور کہا کہ دونوں ممالک 2023ء تک اس کو 10 ارب ڈالرز تک لے جانے کے خواہش مند ہیں۔ اس ہدف کے لیے کاروباری دنیا کے اہم کردار اور تائید کو اہمیت دیتے ہوئے صدر ایردوان نے کہا کہ ترکی-یوکرین تجارتی و اقتصادی تعاون کمیٹی کا اجلاس مارچ میں ہونا طے ہے۔

تبصرے
Loading...