ترکی، موسم گرما کے ٹھنڈے مقامات

0 1,310

ترکی کے جنوبی ساحل کے مقابلے میں بحیرۂ اسود کے کنارے واقع علاقے گرمیوں میں کافی ٹھنڈے ہوتے ہیں اور ان علاقوں کی سیاحت کا بہترین وقت یہی ہے۔ یہاں دن میں عموماً درجہ حرارت 20 درجہ سینٹی گریڈ کے آگے پیچھے رہتا ہے اور شامیں تو 10 ڈگری سے بھی نیچے چلی جاتی ہیں۔ جنوب کی ساحلی تفریح گاہوں کے مقابلے میں بحیرۂ اسود کا سفر کرنے کی بنیادی وجہ ہی یہاں کے خوبصورت تفریحی اور تاریخی مقامات دیکھنا ہے۔

بحیرۂ اسود کے ساحل کے ساتھ ساتھ واقع اس علاقے کے چار مقامات ایسے ہیں، جو ترکی آنے والے کسی بھی سیاح کی فہرست میں ضرور شامل ہونے چاہئیں:

سومیلا خانقاہ، اوزُن گول اور درۂ زگانا

بحیرۂ اسود کے ترک علاقوں کا سب سے عظیم شہر طرابزون ہے، شمال مشرقی ساحلی پٹی پر اسی شہر کا راج ہے جو 700 سال قبل مسیح سے شروع ہونے والی ایک طویل تاریخ رکھتا ہے۔ طرابزون اور اس سے ملحقہ علاقے ریزہ اپنی سطح ہائے مرتفع کی وجہ سے مقبول ہیں۔ جو اسے پہاڑی چراگاہوں اور موسمِ گرما میں ٹھنڈی ہواؤں کی وجہ سے پُرسکون تعطیلات کے لیے بہترین مقامات بناتی ہیں۔

یہاں دیکھنے کے لائق مقامات میں ماچکا کی شاندار سومیلا خانقاہ، زگانا کی سطح مرتفع اور طرابزون کے جنوب میں جھیل کنارے واقع اوزُن گول کا قصبہ ہیں۔ پونٹک پہاڑوں میں واقع یہ خانقاہ 386 سال پرانی ہے اور اس موسمِ گرما میں سیاحوں کے لیے کھولی گئی ہے۔ 15 اگست کو ترکی کے اِس حسین ترین گرجے میں خصوصی تقریب منعقد ہوگی۔ انہی پہاڑوں میں درۂ زگانا کی سطح مرتفع بھی ہے کہ جہاں سے کبھی مارکو پولو جیسے عظیم سیاح کا گزر ہوا تھا۔ یہی راستہ گموش خانہ کی قاراجا غار کی طرف بھی جاتا ہے کہ جسے ترکی کے رنگین ترین غاروں میں شمار کیا جاتا ہے۔ طورل آبشار اور جھیل لمنی بھی علاقے کے قدرتی حُسن کے حامل مقامات میں شامل ہیں۔ اوزُن گول کے گرد رہائش کے کئی مقامات ہیں اور اردگرد کے علاقے دیکھنے کے لیے یہ بہترین جگہ ہے۔

ریزہ میں چاملی ہمشین اور فرتینا کی کھاڑی

ریزہ اور خاص طور پر چاملی ہمشین کا سرسبز علاقہ ہونے کی وجہ معروف ہے، جہاں مشہور ترین سطح مرتفع آئیدر بھی واقع ہے۔ یہ علاقہ اپنے گرم چشموں اور رہنے کے لیے کئی مقامات کی وجہ سے مشہور ہے۔ تقریباً 60 کلومیٹر لمبی فرتینا کی کھاڑی بھی گرم موسم سے دور ایک شاندار جگہ ہے۔ یہاں کشتی رانی کے کئی مواقع موجود ہیں۔ قریب ہی گیتو یلاسی ہے، جو بادلوں سے اوپر ہونے کی وجہ سے انسٹاگرام کلاسک بن چکا ہے۔

بولو کی جھیل ابانت اور دوزجہ

استنبول اور انقرہ جیسے بڑے شہروں سے قربت کی وجہ سے جھیل ابانت ایک زبردست جگہ ہے، جو اردگرد علاقے چھاننے کے لیے رہائش کا بہترین مقام ہے۔ یہ جھیل تودے گرنے سے وجود میں آئی تھی اور اس کے گرد موجود جنگلات مختلف حیوانات اور نباتات سے بھرے پڑے ہیں۔ دوزجہ میں بھی دریا میں کشتی رانی کی جا سکتی ہے اور کیمپنگ اور بنگلوں میں رہائش کے لیے بھی یہ خوبصورت جگہ ہے۔

دو حسین قصبے: اماسرا اور سفران بولو

جو اماسرا جا چکے ہیں، ان کے لیے بحیرۂ اسود کی یہ چھوٹی سی بندرگاہ ترکی کا پسندیدہ ترین مقام ہے۔ بارتین صوبے کا یہ قصبہ ایک جزیرہ نما پر واقع ہے جس کے گرد دو خلیجیں ہیں اور پُل کے ذریعے جڑاہوا ایک جزیرہ بھی۔ اماسرا بلاشبہ ایک حیران کُن مقام ہے اور باقی دنیا سے الگ تھلگ لگتا ہے، یوں یہ شہر سے دُور تعطیلات گزارنے کے لیے بہترین مقام ہے۔ ساحل پر تیراکی کے ساتھ ساتھ شہر کے اندر بھی گھومنے پھرنے کے بڑے مواقع ہیں۔ یہیں سے سفران بولو بھی جاتے ہیں کہ جو ایک خواب ناک جگہ ہے۔ یہ ترکی میں زعفران کا مرکز ہے اور اپنے لکڑی سے بنے خوبصورت گھروں کی وجہ سے معروف ہے۔ کئی مکانات اب نفیس ہوٹلوں میں تبدیل کردیے گئے ہیں۔ قصبہ خود بھی یونیسکو کے عالمی ثقافتی ورثے کا حصہ ہے جبکہ اس کے قریب واقع یانیجہ جنگل ہائیکنگ کے لیے بہترین جگہ ہے۔

تبصرے
Loading...