ترکی کی روایتی مرَش آئس کریم ایشیا، افریقہ اور امریکا برآمد کی جانے لگی

0 354

ترکی کی روایتی مرَش آئس کریم بیشتر ترکوں کی توجہ اس کی جنم بھومی قہرمان مرَش کی طرف لے جاتی ہے، جو جنوب مشرقی اناطولیہ اور بحیرۂ روم کے خطے کے سنگم پر واقع ہے۔

اب بکری کے دودھ اور ثعلب سے بنی یہ ملائی دار اور لچک دار آئس کریم عالمی سطح پر مشہور ہو چکی ہے، کیونکہ ترکی چین، جنوبی افریقہ، امریکا اور مالدیپ جیسے ممالک کو برآمد کر رہا ہے۔ قہرمان مرَش کامرس اینڈ انڈسٹری چیمبر کے بورڈ رکن اردل کنبور نے کہا کہ مرَش آئس کریم دنیا بھر میں برآمد کی جا رہی ہے، مشرقِ بعید، افریقہ اور امریکا کے ممالک تک۔

انہوں نے کہا کہ شہر اس مزیدار آئس کریم کا ذائقہ چکھنے کے لیےسیاحوں کا خیرمقدم کرتا ہے۔ ملاطیہ سے آنے والے ایک مہمان بہادر ایواز کے مطابق یہ بکری کا دودھ ہے جو مرَش آئس کریم کو انوکھا ذائقہ دیتا ہے۔ "صرف اس آئس کریم کا ذائقہ چکھنے کے لیے مرَش کا سفر کرنا گھاٹے کا سودا نہیں ہے۔”

قہرمان مرش جنوب مشرقی اناطولیہ کے سفر کا آخری پڑاؤ بھی بن چکا ہے۔ "جنوب مشرقی اناطولیہ کے سفر کے بعد ہم نے مرَش آنے کی ٹھانی، آئس کریم کی جائے پیدائش۔” ایک ٹؤر گائیڈ زبیر یلماز نے کہا۔

مرَش دوندرما، یعنی مرَش آئس کریم، بکری کے دودھ، چینی اور جنگلی ثعلب کے تنوں سےبننے والے پاؤڈر سے تیار کی جاتی ہے۔

تبصرے
Loading...