امارتی وزیر خارجہ کی ایردوان پر طنز کرتے ہوئے ترکوں اور عربوں کو لڑانے کی کوشش، ترکی کا سخت ردعمل

0 5,485

متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ نے اپنی ایک تازہ ٹویٹ میں صدر طیب ایردوان پر طنز کرتے ہوئے کہا: "کیا آپ جانتے ہیں 1916ء جنگ عظیم اول میں ترک فخر الدين پاشا کے جرائم جن کا ارتکاب انہوں نے اہل مدینہ منورہ کے ساتھ کیا٬ ان کو لوٹا٬ اغوا کیا اور شام سے استنبول جانے والی ٹرینوں کے مسافروں کو بھی نہ بخشا جسے ‘سفر برلک’ کا نام دیا گیا۔ اسی طرح ترکوں نے مدینہ منورہ کی محمودیہ لائبریری سے قدیم تاریخی مسودے چوری کئے اور ترکی بھیج دیئے- یہ ہے ایردوان کے آباو اجداد اور ان کی تاریخ عرب مسلمانوں کے ساتھ”۔

ترک صدارتی ترجمان نے اس پر فوری ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ یہ وزیر خارجہ کے لیے شرم کا مقام ہے کہ جو ایک جھوٹ کو پروپیگنڈا کے طور پر استعمال کر رہا ہے تاکہ ترک اور عرب ایک دوسرے کے خلاف کھڑے ہو جائیں۔ یہ فرید الدین پاشا ہی تھے جنہوں نے برطانوی منصوبہ بندی کے سامنے بہادری سے مدینہ کا دفاع کیا۔ کیا کسی بھی قیمت پر ایردوان پر حملہ کرنا اب فیشن بن گیا ہے؟

مشرق وسطیٰ کے مقامی رہنماء ترکی اور ترک صدر رجب طیب ایردوان کے خطے پر بڑھتے ہوئے اثرات سے خوفزدہ ہیں۔ حال ہی میں پیو ریسرچ سنٹر کی رپورٹ کے مطابق رجب طیب ایردوان مشرق وسطیٰ کی مقامی قیادتوں سے بھی زیادہ معروف اور مقبول شخصیت ہیں۔

تبصرے
Loading...