مسلم اکثریتی کشمیر میں ظالمانہ اقدامات کے باوجود عرب امارات بھارت کے مودی کو اعزاز سے نوازے گا

0 2,184

متحدہ عرب امارات بھارت کے وزیر اعظم نریندر مودی کو ملک کا اعلیٰ ترین شہری اعزاز "آرڈر آف زاید” دینے کے لیے تیاری کر رہا ہے کہ جو جلد ہی ملک کا دورہ کریں گے۔ مودی کو یہ اعزاز اس وقت دیا جارہا ہے جب مسلم اکثریتی ریاست کشمیر میں بدترین کریک ڈاؤن کی وجہ سے بھارتی حکومت کڑی تنقید کی زد میں ہے۔

سوشل میڈیا پر صارفین کی بڑی تعداد نے امارات کے اس منصوبے پر کڑی تنقید کی ہے۔

درحقیقت "آرڈر آف زاید” یا "زاید میڈل” مودی کو دینے کا پہلی بار اعلان اپریل میں کیا گیا تھا جب ایک اور متنازع ولی عہد اور اپنے نام کے ابتدائی تین حروف سے ہی پہچانے جانے والے محمد بن زاید نے ٹویٹ کیا تھا کہ "ہم بھارت کے ساتھ تاریخی اور جامع تزویراتی تعلقات رکھتے ہیں، جو میرے عزیز دوست وزیر اعظم نریندر مودی کے مؤثر کردار کی وجہ سے مضبوط ہوئے ہیں، جنہوں نے ان تعلقات کو بہت بڑھاوا دیا ہے۔ ان کی کوششوں کو سراہتے ہوئے عرب امارات کے صدر نے انہیں زاید میڈل دینے کا فیصلہ کیا ہے۔”

ایک سوشل میڈیا صارف نورین حیدر نے یہ کہتے ہوئے ردعمل ظاہر کیا کہ "یہ زخموں پر نمک چھڑکنے کے مترادف ہے، عرب امارات آخر ایسا کیوں؟”

مودی کا دورہ متحدہ عرب امارات سے شروع ہوگا جہاں سے وہ بحرین جائیں گے۔

1947ء میں برطانیہ سے آزادی ملنے کے بعد بھارت کی جانب سے ریاست کو ملنے والی خصوصی حیثیت 5 اگست کو ختم کی گئی کہ جس کے بعد سے کشمیری تقریباً روزانہ ہی مظاہرے کر رہے ہیں۔

پولیس حکام کا کہنا ہے کہ بھارت کے خلاف حالیہ چند ہفتوں میں 300 مظاہرے اور تصادم ہوئے ہیں۔

کشمیر کے اعلیٰ پولیس حکام کے مطابق ہزاروں افراد، جن میں اکثریت نوجوانوں کی ہے،اس کمیونی کیشن بلیک آؤٹ اور سکیورٹی لاک ڈاؤن کے دوران گرفتار ہوئے ہیں۔

تبصرے
Loading...