دنیا میں طاقتور بننے کی شاہ کلید ہماری یکجہتی اور اتحاد ہے، ایردوان

0 203

انقرہ میں ازبکستان کے صدر شوکت میرزیوف کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس کے دوران ترک صدر رجب طیب ایردوان نے کہا: "ہم اس بات پر توجہ مرکوز کیے ہوئے ہیں کہ کیسے ترک اسلامی تہذیب کی قدیم بنیادیں ہمیں فوائد دے سکتی ہیں۔ ہم نے اپنے تمام شعبوں اور وزارتوں کو ہدایت دے رکھی ہے کہ وہ ترکی اور ازبکستان کے ساتھ ہر میدان میں تعلقات کو مضبوط کریں۔ مجھے خوشی ہوتی ہے کہ ازبکستان بھی ایسی ہی خواہش رکھتا ہے”۔

انہوں نے مزید کہا: "ہم دلی طور پر چاہتے ہیں کہ وسط ایشیا کے ممالک کے ساتھ تعاون کو مضبوط بنائیں۔ جیسا کہ ہم نے ہمیشہ اس بات کا اظہار کیا ہے کہ دنیا میں مضبوط اور طاقتور بننے کی شاہ کلید ہماری یکجہتی اور اتحاد ہے، اس سمت میں اٹھایا جانے والا ہر قدم بہت قیمتی اور انمول ہے”۔

اس موقع پر ازبکستان کے صدر نے کہا کہ ترکی، ازبکستان کا ایک اہم اور قابل بھروسہ ساتھی ہے۔ اور وہ اپنے تمام ذرائع اور وسائل کو ترکی اور ازبکستان کے درمیان بھائی چارے کو مضبوط کرنے واسطے حرکت میں لانے کے لیے تیار ہیں۔

صدر ایردوان نے کہا کہ سیاحت کے تناظر میں ثمرقند، بخارا اور تاشقند نہایت اہم ہیں۔ بلکہ ان شہروں کی وجہ سے ازبکستان ہماری تہذیب کا گڑھ بنتا ہے۔ یہ قدیم شہر نہ صرف ترکی کے لیے بہت معنی رکھتے ہیں بلکہ سارے ترکوں اور اسلامی دنیا کے لیے اہم مقامات ہیں۔ ہم اس سلسلے میں مشترکہ پروجیکٹ بنائیں گے۔

تبصرے
Loading...