امریکہ کو شامی شہر منبج سے نکل جانا چاہیے، ایردوان

0 1,206

ترک صدر رجب طیب ایردوان نے کہا ہے کہ امریکہ کو چاہیے کہ وہ شامی شہر منبج کو چھوڑ دے- کیونکہ ترکی کا مقصد ہے کہ یہ زمین اس کے اصل مالکان کے حوالے کی جائے-

انقرہ میں آق پارٹی کے پارلیمانی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے شام بارے اپنے وعدے وفا نہ کرنے پر امریکہ کو تنقید کا نشانہ بنایا-

ایردوان نے کہا، "انہوں نے ہمیں کہا کہ ہم منبج چھوڑ دیں گے لیکن وہ ابھی تک وہاں کیوں ہیں؟”- انہوں نے کہا کہ امریکہ نے منبج میں پی کے کے کی شامی شاخ پی وائے ڈی کو منبج میں جگہ دی ہے-

ترک صدر نے ایک بار پھر اعادہ کیا کہ ترکی شہر کو دہشتگردوں سے آزاد کروانے کے لیے وہاں جائے گا اور اس کے حقیقی مالکان کے حوالے کرے گا-

انہوں نے کہا کہ ہمارا قبضہ کرنے کا کوئی ارادہ نہیں ہے جیسا کہ امریکہ کا ہوتا ہے- جیسا کہ وہ افغانستان میں ہے اور گذشتہ 15 سال سے عراق پر قبضہ جمائے ہوئے ہے-

انہوں نے مزید کہا، "امریکہ، شمالی شام میں ابھی تک اسلحہ کیوں بھیجتا ہے؟ جبکہ وہاں سے داعش کا صفایا ہو چکا ہے- آپ ابھی تک یہاں کیوں ہو؟ یہ اسلحہ ابھی بھی یہاں کیوں آتا ہے؟ ضرور آپ ترکی، ایران اور ہو سکتا ہے روس کے خلاف عزائم رکھتے ہوں گے”-

انہوں نے عندیہ دیا کہ ترکی، امریکہ کی طرف سے وائے پی جی دہشتگردوں کو اسلحہ کی فراہمی پر ضروری اقدامات کرے گا-

تبصرے
Loading...