امریکا ڈالروں سے دوسروں کو خریدنے کی کوشش کر رہا ہے، ایردوان

0 1,389

ترک صدر رجب طیب ایردوان نے بیت المقدس پر اقوام متحدہ کی قرار داد کے حق میں ووٹ دینے پر امریکی صدر کی دھمکی پر سخت ردعمل دیا ہے-
انہوں نے کہا: "اے ٹرمپ! تم ڈالروں سے ترکی کی آزاد جمہوری رائے کو نہیں خرید سکتے”- وہ ثقافت و آرٹ کی تقریب تقسیم اعزازات سے خطاب کر رہے تھے-
ایردوان نے کہا: "باقی ملک امریکا کو کیا نام دیتے ہیں؟ ‘جمہوریت کا پنگھوڑا’، تو جمہوریت کا پنگھوڑا آزاد جمہوری آراء کو ڈالروں سے خریدنے کی کوشش کر رہا ہے”-
ایردوان نے دنیا کے ممالک سے اپیل کی کہ وہ جمہوریت کی جنگ میں اپنی آزاد رائے کو مت بیچیں”-
آج اقوام متحدہ کی 93 رکنی جنرل اسمبلی ٹرمپ کے بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت بنانے کے فیصلہ کے خلاف خصوصی اجلاس میں ووٹنگ کرے گی- مجموعی طور پر بھاری اکثریت امریکی فیصلہ کے خلاف ووٹ دے گی-
بدھ کے روز ٹرمپ نے وائٹ ہاؤس میں کہا تھا کہ وہ ہم سے لاکھوں کروڑوں ڈالر لیتے ہیں اور ہمارے خلاف ووٹ دیں گے- سہی ہے ہم ان ووٹوں کو دیکھیں گے- انہیں ہمارے خلاف ووٹ دینے دو، ہم حساب پورا کریں گے اور کسی کا لحاظ نہیں کریں گے-
ترک صدر نے ان امریکی پابندیوں کا ذکر بھی کیا جو 1997ء میں سوڈان پر دہشتگردی سے روابط کے جرم پر عائد کی گئیں اور جنہیں 2006ء میں مزید سخت کر دیا گیا اس کے بعد اکتوبر میں ان میں سے کئی پابندیاں اٹھا لی گئیں-
ایردوان نے پوچھا: "جب ہم ان چیزوں کو دیکھتے ہیں تو ہم خود سے سوال کرتے ہیں کہ ‘یہ کس قسم کی جمہوریت ہے؟”‘
انہوں نے کہا کہ دوسروں کی ان کی آزاد رائے کے مطابق فیصلہ کرنے دیا جائے-

تبصرے
Loading...