ازبکستان کے ساتھ باہمی تجارت کا حجم 5 ارب ڈالرز تک لانا ہمارا ہدف ہے، صدر ایردوان

0 253

ازبکستان کے صدر شوکت مرضیویف کے ساتھ ایک مشترکہ پریس کانفرنس میں صدر رجب طیب ایردوان نے کہا کہ "ہم دو طرفہ تجارت میں پہلی بار درآمدات و برآمدات کو 1 ارب ڈالرز سے آگے لے گئے ہیں لیکن اب بھی بہت لمبا سفر باقی ہے۔ جنابِ صدر اور میرا ہدف باہمی تجارت کا حجم 5 ارب ڈالرز تک لانا ہے۔”

صدر رجب طیب ایردوان نے ایوانِ صدر میں ازبکستان کے صدر شوکت مرضیوف کے ساتھ ایک مشترکہ پریس کانفرنس کی۔

"ہم ازبکستان کے ساتھ اپنے تعلقات کو برادرانہ تعلقات پر مبنی تزویراتی شراکت داری سمجھتے ہیں”

"ہم ازبکستان کے ساتھ اپنے تعلقات کو ایک تزویراتی شراکت داری سمجھتے ہیں، جو مضبوط برادرانہ تعلقات پر مبنی ہے کہ جن کی جڑیں مشترکہ تاریخ، زبان اور ثقافت میں ہیں۔ اپنی 34 ملین کی نوجوان اور متحرک آبادی، اپنے قدرتی وسائل، صنعتی صلاحیت اور بہترین زرعی مصنوعات کے ساتھ ازبکستان خطے میں توجہ کا مرکز بننے کے لیے اقدامات اٹھا رہا ہے۔”

صدر مرضیوف کی زیرِ قیادت اصلاحات کے عمل کو سراہتے ہوئے صدر ایردوان نے کہا کہ ترکی کامیابی کے لیے ازبکستان کو ہر قسم کی مدد فراہم کرنے کو تیارہے۔”

"ازبکستان کے ساتھ ہماری باہمی تجارتی کا حجم 27 فیصد بڑھا ہے”

صدر ایردوان نے کہا کہ "پچھلے سال کےمقابلے میں 2019ء میں ازبکستان کے ساتھ ہماری باہمی تجارت کا حجم 27 فیصد بڑھا ہے۔ یہ بلاشبہ ایک بڑی کامیابی ہے کہ ہمارا باہمی تجارتی حجم 2.2 ارب ڈالرز تک جا پہنچا ہے۔ ہم پہلی بار باہمی تجارت میں درآمدات اور برآمدات دونوں کو 1 ارب ڈالرز سے آگے لے جانے میں کامیاب رہے، لیکن اب بھی بہت لمبا سفر باقی ہے۔ جناب صدر اور میں باہمی تجارت کے حجم کو 5 ارب ڈالرز تک لے جانے کا عزم رکھتے ہیں۔ ہم نے عسکری تعلقات اور ٹرانسپورٹیشن، توانائی، صحت عامہ، سیاحت، تعلیم اور دفاعی صنعت میں اپنے تعاون کو مزید بہتر بنانے کے لیے خیالات کا تبادلہ کیا ہے۔”

تبصرے
Loading...