ہم نے ان تمام قواعد و ضوابط کو منسوخ کر دیا ہے جو عوام کے حقوق اور آزادی میں رکاوٹ ڈالتے تھے، ایردوان

0 928

ترک صدر رجب طیب ایردوان نے کہا ہے کہ "ہم نے ان تمام قواعد و ضوابط کو منسوخ کر دیا ہے جو عوام کے حقوق اور آزادی میں رکاوٹ ڈالتے تھے۔ ہم نے ایک ایسی ذہنیت کو قوت دی ہے جس سے شہریوں کو ریاست کے دشمن کے بجائے ریاست کو شہریوں کی خدمتگار کے طور پر دیکھا جاتا ہے”۔

ترک صدر اور آق پارٹی کے چیئرمین رجب طیب ایردوان نے آکسارے میں آق پارٹی کی ریلی سے خطاب کیا۔

ہم نے اپنے تمام شہریوں کو گلے لگانے کی کوشش کی ہے

صدر ایردوان نے کہا، "میں یقین کرتا ہوں کہ بحیثیت آق پارٹی معاشیات، طب اور سرمایہ کاری کے علاوہ ہماری اس ملت کی سب سے بڑی خدمت حقوق اور آزادی کے میدان میں ہے”۔ انہوں نے مزید کہا، "ہم نے ان تمام قواعد و ضوابط کو منسوخ کر دیا ہے جو عوام کے حقوق اور آزادی میں رکاوٹ ڈالتے تھے۔ ہم نے ایک ایسی ذہنیت کو قوت دی ہے جس سے شہریوں کو ریاست کے دشمن کے بجائے ریاست کو شہریوں کی خدمتگار کے طور پر دیکھا جاتا ہے”۔

آکسارے میں سرمایہ کاری

اپنی انتظامی دور میں آکسارے میں ہونے والی سرمایہ کاری کا ذکر کرتے ہوئے رجب طیب ایردوان نے کہا کہ انہوں نے شہر میں 11 بلین ترکش لیرا کی سرمایہ کاری کی ہے۔ انہوں نے وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ 1798 نئے کلاس روم بنائے گئے، ایک یونیورسٹی بنائی گئی، 8121 طلباء کے لیے ریاستی ڈارمنٹری بنائی گئی، 23 طبی یونٹس کا قیام کیا گیا جن میں 400 بیڈ کے آکسارے اسٹیٹ ہسپتال سمیت 7 ہسپتال ہیں۔ 4840 رہائشی منصوبے ہیں، 191 کلومیٹر ہائی وے سڑک کی تعمیر ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ چاہتے ہیں کہ شہر میں ہائی اسپیڈ ٹرین ہونا چاہیے۔

صدر ایردوان نے شہریوں کے ساتھ افطار کیا

دن کے اختتام پر ترک صدر ایردوان نے شہریوں کے ساتھ افطار کیا۔ اس موقع پر بھی انہوں نے مختصر خطاب کیا۔

تبصرے
Loading...