ہم دفاعی میدان میں ترکی کو عالمی کھلاڑی بنائیں گے، ایردوان

0 826

انقرہ میں آق پارٹی کی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین آق پارٹی اور صدر جمہوریہ ترکی رجب طیب ایردوان نے کہ ہمارے انتظامی دور میں دفاعی منصوبے 66 سے بڑھ کر 600 ہو چکے ہیں۔ انہوں نے کہا، "اپنے اصل ڈیزائن اور اعلی سطحی ٹیکنالوجی کی وجہ سے ہم ترکی کو اگلے تین سال میں دفاعی میدان کا عالمی کھلاڑی بنا دیں گے”۔

خطاب کا آغاز کرتے ہوئے ترک صدر نے کہا کہ 15 جولائی کو انقرہ نے ایک سچی تاریخ رقم کر دی تھی۔ انہوں نے کہا کہ یہ شہریوں کا سب سے اہم کردار تھا جس کی وجہ سے فوجی بغاوت ناکام ہوئی۔ مزید کہا، "انقرہ کے شہریوں نے نہ صرف اپنی آزادی اور مستقبل کا دفاع کیا بلکہ انہوں نے ترکی کے مستقبل کے لئے ٹینک، جیٹ طیاروں، ہیلی کاپٹروں اور بیرل بم کے مقابلے میں اپنے جسموں کو ڈھال کے طور پر  استعمال کیا”۔

انقرہ میں سرمایہ کاری

انہوں نے گذشتہ 16 سال میں انقرہ میں ہونے والی 116 بلین ترکش لیرا کی طرف توجہ مبذول کرواتے ہوئے تفصیل بتائی اور کہا کہ 15 ہزار نئے کلاس رومز، 10731 یونیورسٹی طلباء کے لیے سٹیٹ ڈارمنٹریاں، 12 نئی یونیورسٹیاں، 137 ہیلتھ کیئر یونٹس جن میں 32 ہسپتال شامل ہیں، 95 ہزار رہائشی یونٹ، 534 کلومیٹر طویل ہائی وے جبکہ کئی سب وے سڑکیں بنائی گئی ہیں۔ صدر ایردوان نے بتایا کہ دارالحکومت کو اسکیشہر، قونیا، بلجک، سکاریا، کوجاہلی اور استنبول سے ہائی اسپیڈ ریل لائنز کے ساتھ ملایا گیا ہے۔

دفاعی منصوبوں کی تعداد 66 سے 600 تک پہنچا دی گئی ہے

دفاعی انڈسٹری بارے بات کرتے ہوئے صدر ایردوان نے بتایا کہ اس صنعت کا 80 فیصد انقرہ میں موجود ہے جو سالانہ 6 بلین ڈالرز کی پیداوار دیتا ہے جبکہ 2016ء میں 2 بلین ڈالرز کی برآمدات کی گئیں۔ انہوں نے مزید بتایا کہ ہمارے انتظامی دور میں دفاعی منصوبے 66 سے بڑھ کر 600 ہو چکے ہیں۔ اس کے ساتھ دفاعی بجٹ 43 بلین ڈاکرز ہو چکا ہے۔ جبکہ سالانہ تحقیقاتی اور ترقیاتی اخراجات 1.25 بلین ڈالرز ہیں۔ صدر ایردوان نے کہا کہ اپنے اصل ڈیزائن اور اعلی سطحی ٹیکنالوجی کی وجہ سے ہم ترکی کو اگلے تین سال میں دفاعی میدان کا عالمی کھلاڑی بنا دیں گے۔

تبصرے
Loading...