دنیا کو صدر ایردوان کے مطالبات پر غور کرنا پڑے گا، فخر الدین آلتن

0 110

صدارتی کمیونی کیشنز ڈائریکٹر فخر الدین آلتن نے عالمی طاقتوں پر زور دیا ہے کہ وہ عالمی چیلنجز کے مقابلے میں قدم اٹھانے کے لیے صدر رجب طیب ایردوان کے مطالبات پر کان دھریں۔

اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کے لیے صدر ایردوان کے دورۂ امریکا کی تکمیل پر آلتن نے کہا کہ "دنیا کو ہمارے ساتھ مل کر اقدامات اٹھانا ہوں گے اور صدر کے مطالبات پر غور کرنا ہوگا۔”

آلتن نے کہا کہ جنرل اسمبلی اجلاس کامیاب رہا ہے اور اس نے حالیہ مسائل پر بین الاقوامی تعاون سے ترکی کی وابستگی کی توثیق کی ہے۔

انہوں نے کہا کہ صدر ایردوان نے نئے ترکش ہاؤس (ترکیوی) میں درجن سے زیادہ بین الاقوامی رہنماؤں کی میزبانی کی جس میں لیبیا، افغانستان، شام اور دیگر بحران سے دوچار ممالک کو مدد فراہم کر سکیں۔

آلتن نے کہا کہ "صدر نے امریکی انخلا کے بعد افغانستان کو مستحکم کرنے میں مدد کے لیے ترکی کے ارادے ظاہر کیے۔ انہوں نے نئی جامع انتظامیہ کا مطالبہ کیا کہ جس میں تمام نسلی اور سیاسی گروہ شامل ہوں۔ ترکی ملک میں امن کے قیام کے لیے مدد کرنے کو تیار ہے۔”

صدر ایردوان اتوار کو اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 76 ویں اجلاس میں شرکت کے لیے نیو یارک روانہ ہوئے تھے۔ اپنے دورۂ امریکا میں صدر ایردوان نے عالمی انصاف کے لیے اپنے پیغام کا اعادہ کیا اور عالمی رہنماؤں سے دو طرفہ ملاقاتیں کیں۔ صدر کے ایجنڈے پر سب سے اہم معاملات اقوام متحدہ میں اصلاحات، غیر قانونی ہجرت کے خلاف جدوجہد، موسمیاتی تبدیلی، اسلاموفوبیا اور کووِڈ-19 کی وبا پر قابو پانے کے لیے معلومات اور تجربے کو بانٹنا شامل تھے۔

نیو یارک میں واقع جنرل اسمبلی کے 76 ویں اجلاس میں 130 ممالک کے سربراہان، وزرائے خارجہ اور وفود نے شرکت کی۔

تبصرے
Loading...